انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرانے والوں کی تعداد 25 لاکھ تک جا پہنچی

انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرانے والوں کی تعداد 25 لاکھ تک جا پہنچی
image by twitter

اسلام آباد : حکومت کی معاشی پالیسیوں کے مثبت اثرات سامنے آنے لگے ، انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرانے والوں کی تعداد میں 25 لاکھ سے تجاوز کر گئی۔


تفصیلات کے مطابق فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے کہا اکیس اگست تک انکم ٹیکس فائلرز کی تعداد میں ایک سال کے دوران 69 فیصد اضافہ ہوا ہے، گزشتہ سال کےمقابلےمیں تیرہ لاکھ ساٹھ ہزار فائلرزکااضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

ان لینڈ ریونیو آپریشنز کے سربراہ بختیار محمد کے مطابق 21 اگست 2019 تک انکم ٹیکس فائلرز کی تعداد 25 لاکھ ہو گئی تھی ، گزشتہ سال یہ تعداد 15 لاکھ تھی۔گوشوارے جمع کروانے والوں کی تعدادمیں یہ اضافہ تاریخی ہے، رواں مالی سال کیلئےحکومت نےٹیکس وصولیوں کا ہدف پانچ ہزار پانچ سو پچاس ارب روپے رکھا ہے۔

ان لینڈ ریونیو آپریشنز کے سربراہ بختیار محمد نے کہا کہ ایف بی آر کی تاریخ میں پہلی بار انکم ٹیکس فائلرز کی تعداد 25 لاکھ تک جا پہنچی ہے جو کہ حوصلہ افرا بات ہے جبکہ وزیر اعظم عمران خان اور مشیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ نے انکم ٹیکس فائلرز کی تعداد میں اضافے پر ایف بی آر چیئرمین شبر زیدی اور ان کی ٹیم کی کاوشوں کی تعریف کی ہے۔

اسٹیٹ بنک آف پاکستان کے تازہ اعداد و شمار کے مطابق حکومتی اقدامات کی وجہ سے پاکستان کے جاری کھاتوں کے خسارے میں 73 فیصد کمی واقع ہوئی ہے، جولائی 2018 میں جاری کھاتوں کا خسارہ 2.13 ارب ڈالر تھا جو 2019 میں کم ہوکر 579 ملین ڈالر رہ گیا، جو کہ مجموعی خسارے کا 72 فیصد ہے۔

اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ ماہ جاری کھاتوں کا خسارہ کم ہوکر مجموعی گھریلو پیداوار (جی ڈی پی) کا 2.5 فیصد رہ گیا۔ 2018 میں یہ جی ڈی پی کا 8.3 فیصد تھا۔