زینب کا قاتل اہل خانہ کے ہمراہ بچی کو ڈھونڈتا رہا

زینب کا قاتل اہل خانہ کے ہمراہ بچی کو ڈھونڈتا رہا

لاہور: زینب قتل کیس کا مرکزی ملزم عمران عرف مانا اہل خانہ کے ہمراہ بچی کو ڈھونڈتا رہا ۔


ذرائع کے مطابق ملزم زینب کے قتل پرہونے والے تمام احتجاج میں شامل رہا، ملزم وقوعہ کے بعد مدعیوں کے ساتھ پھرتا رہا، ملزم کا پہلا ڈی این اے ٹیسٹ 14 جنوری جبکہ دوسرا 20 جنوری کوہوا۔

وزیراعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف نے کہا ہے کہ 14 روز کی محنت کے بعد جے آئی ٹی نے قصور میں دن رات کام کر کے قاتل کی گرفتار کو یقینی بنایا جس میں خفیہ ایجسنیوں کا تعاون بھی شامل ہے۔

وزیراعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف نے صوبائی وزیر قانون رانا ثنا اللہ ، زینب کے والد کے ساتھ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ زینب کے قاتل کا نام عمران ہے جو کہ قصور کا رہنے والا ہے۔