سانحہ ساہیوال پر جے آئی ٹی کے بعد جوڈیشل کمیشن بنانے کیلئےبھی تیار ہیں ، عمران خان

سانحہ ساہیوال پر جے آئی ٹی کے بعد جوڈیشل کمیشن بنانے کیلئےبھی تیار ہیں ، عمران خان
فوٹو بشکریہ پی آئی ڈی

اسلام آباد: تحریک انصاف کی پارلیمانی پارٹی کےاجلاس کی اندورنی کہانی سامنے آ گئی ۔


وزیراعظم کا سانحہ ساہیوال معاملےپر صوبائی وزراکےمتضاد بیانات پر غصہ ٹھنڈا نہ ہوسکا۔وزیراعظم نے سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وزراءنے مناسب تیاری کے بغیر بیانات کیوں دیے؟ وزیر اعظم نےسب پر واضح کردیا کہ آیندہ بغیر تیاری کے میڈیا میں نہ آیا جائے۔

وزیر اعظم نے مؤقف اختیار کرتے ہوئے کہا کہ جے آئی ٹی کے بعد اب جوڈیشل کمیشن بنانے کو تیار ہیں اگر اپوزیشن مطالبہ کرتی ہے تو جوڈیشل کمیشن بنادیں گے۔

وزیر اعظم کا اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ زندگیوں کا مسئلہ ہے،معافی کی گنجائش نہیں ۔اس موقع پر ارکان قومی اسمبلی نے حلقوں میں ترقیاتی کام نہ ہونے کی بھی شکایت کردی۔اتحادی ارکان نے بھی سانحہ ساہیوال کےمعاملے پر سخت اقدامات کرنے مشورہ دیا ۔

اس موقع پر وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ماضی کے حکمرانوں نے غلطیاں کیں ہم پولیس نظام میں اصلاحات لائینگے۔کسی معاملے میں عوام کو دھوکےمیں رکھنے کا قائل نہیں ،نہ ایسا کرنے دونگا۔انہوں نے کہا کہ ہم نے5 ماہ مشکل وقت گزارا ،اب بہتری کی خبریں بھی عوام تک پہنچائی جائیں۔ عمران خان نے کہا کہ ہم گزشتہ حکومتوں سے بہتر ثابت ہوئے ہیں ،فرق نظر آنا چاہیے۔وزرا اور پارٹی رہنما اعداد وشمار میں اپوزیشن جماعتوں سے زیادہ تیار نظر آنے چاہییں۔