مری اور گلیات میں پھر شدید برف باری، نظام زندگی مفلوج

مری اور گلیات میں پھر شدید برف باری، نظام زندگی مفلوج
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

مری: مری اور گلیات میں ایک بار پھر شدید برف باری ک ےباعث نظام زندگی مفلوج ہو کر رہ گیا ہے اور انتظامیہ کا کہنا ہے کہ اب تک ڈیڑھ فٹ سے زائد برف پڑچکی ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق مری اور گلیات میں رات سے اب تک تیز برف باری کا سلسلہ جاری ہے جس کے باعث نتھیا گلی سے مری جانے والی سڑک پر 3 مقامات پر برفانی تودے گرنے سے بند ہوگئی۔

انتظامیہ کی جانب سے سیاحوں کو مری آنے سے روک دیا گیا ہے جبکہ علاقے میں بجلی اور پانی کی فراہمی معطل ہونے کے باعث پہلے سے وہاں موجود سیاح پریشانی کا شکار ہیں۔ 

ذرائع کے مطابق ناران، بابوسرٹاپ اور استور میں بھی ہر طرف برف ہی برف ہے جس کے باعث لوگ گھروں میں محصور ہیں تاہم شمالی اور جنوبی وزیرستان میں برف باری سے بند مرکزی شاہراہیں کھول دی گئیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق کوئٹہ میں درجہ حرارت منفی 5، قلات میں منفی 9، زیارت میں منفی 11 تک گر گیا جس کے باعث پرنالوں اور سڑکوں پر پانی جم گیا ہے اور نظام زندگی رک سا گیا ہے۔ 

دوسری جانب لاہور اور پشاور میں بارش کے بعد سردی میں اضافہ ہو گیا ہے جبکہ محکمہ موسمیات نے کراچی میں سردی کی لہر جمعرات تک جاری رہنے کی پیش گوئی کی ہے۔