سعودی ولی عہد محمد بن سلمان نے رحم دلی کی اعلیٰ مثال قائم کر دی

سعودی ولی عہد محمد بن سلمان نے رحم دلی کی اعلیٰ مثال قائم کر دی

ریاض : سعودی عرب کے نئے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے ماہ رمضان کے دوران انسانی ہمدردی اور رحم دلی کی اعلیٰ مثال قائم کرتے ہوئے قیدیوں کی رہائی کے لئے چلائی جانے والی مہم کو دو کروڑ سعودی ریال کی خطیر رقم عطیہ کی ہے۔


محمد بن سلمان کی جانب سے عطیہ کردہ یہ رقم پوری مہم میں جمع ہونے والی مجموعی رقم کا 20 فیصد بنتی ہے۔ یہ رقم اس مہم کو دیا جانے والا سب سے بڑا انفرادی عطیہ ہے۔قیدیوں کی رہائی کی مہم کے تحت جمع کی جانے والی رقم کی مدد سے 1414 افراد کی جیل سے رہائی کو یقینی بنایا گیا ہے۔ اس سے پہلے ولی عہد نے جازان کے علاقے کی قومی کمیٹی برائے بحالی اسیران کے ایک پروگرام کو 20 لاکھ سعودی ریال کی امداد دی تھی۔

اس کے علاوہ محمد بن سلمان نے عسیر، نجران اور دیگر جنوبی سرحدی علاقوں میں بھی ایک کروڑ دس لاکھ سعودی ریال کی خطیر رقم کی امداد دی تاکہ مالی وجوہات کی بناء پر جیلوں میں پھنسے قیدیوں کی رہائی کو یقینی بنایا جاسکے۔

واضح رہے اس فنڈ  کے تحت رہا کیئے جانے والے قیدیوں میں ملکی اور غیر ملکی شہر ی شامل ہوتے ہیں ۔ ولی عہد کے اس جذبے کو ملکی اور غیر ملکی شہریوں نے سراہا ہے ۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں۔