ایران کے تباہ کن رویے کو لگام دی جائے‘ سعودی عرب کا سیکیورٹی کونسل کے نام خط

ایران کے تباہ کن رویے کو لگام دی جائے‘ سعودی عرب کا سیکیورٹی کونسل کے نام خط

ریاض:سعودی عرب نے اقوام متحدہ کی سیکیورٹی کونسل کے نام ایک خط لکھا ہے جس میں خطے کے اندر ایرانی سرگرمیوں کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے عالمی ادارے سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ وہ تہران کے تباہ کن رویے کو لگام دے۔


عالمی ادارے کے نام خط میں ایران کی غیر ذمہ دارانہ سرگرمیوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ ان کی وجہ سے خطے کی صورتحال انتہائی خطرناک ہوتی جا رہی ہے۔خط میں مزید کہا گیا ہے کہ ایران خطے میں اپنی پراکیسز کو مسلسل مدد وتعاون فراہم کر رہا ہے جس سے دونوں ملکوں کی سلامتی، استحکام اور عالمی منڈیوں کو تیل کی ترسیل کو گزند پہنچنے کا اندیشہ ہے۔

سعودی عرب نے سیکیورٹی کونسل اور بین الاقوامی برادری سے اپیل کی ہے کہ وہ اپنی ذمہ داری کا احساس کرتے ہوئے ایران سے متعلق ٹھوس موقف اپنائیں۔ خط میں اس بات پر بھی زور دیا گیا ہے کہ جنگ روکنے کے لئے تمام ضروری اقدامات اٹھائیں جائیں۔سعودی عرب، ایران پر الزام عاید کرتا ہے کہ وہ حوثی ملیشیا کی مدد کر کے یمن سمیت متعدد عرب ملکوں کے استحکام کو گزند پہنچا رہا ہے۔

ان باغیوں کو بیلسٹک میزائل اور ڈرون طیاروں جیسے آلات حرب دیئے جا رہے ہیں جنہیں وہ سعودی عرب کو نشانہ بنانے کے لئے استعمال کر رہے ہیں۔یاد رہے دو روز قبل بھی سعودی عرب کی ائر ڈیفنس یونٹس نے حوثیوں کے ذریعے آپریٹ کیا جانے والا بغیر پائیلٹ ڈرون طیارہ نجران میں مار گرایا تھا۔