یورپ سے اخراج: برطانوی اثاثوں کی مالیت 1.5 ٹریلین ڈالر کم ہو گئی

یورپ سے اخراج: برطانوی اثاثوں کی مالیت 1.5 ٹریلین ڈالر کم ہو گئی

لندن: سوئٹزر لینڈ کے بینک کریڈٹ سوئس نے کہا ہے کہ یورپی بلاک سے اخراج کیلئے ریفرنڈم کے بعد پاونڈ کی شرح تبادلہ گرنے سے برطانوی قوم کے اثاثوں کی مالیت 1.5 ٹریلین ڈالر کم ہوچکی ہے۔ بینک کی جانب سے جاری ہونے والی حالیہ رپورٹ کے مطابق یورپی بلاک سے اخراج کے فیصلے نے برطانوی معیشت اور عوام پر منفی اثر ڈالا۔


اخراج کے فیصلے کے بعد پاونڈ کی شرح تبادلہ گرنے سے برطانوی عوام کے اثاثوں کی مالیت میں بھی کمی آئی جن کی قدر اب تک 1.5 ٹریلین ڈالر سے زیادہ گرچکی ہے۔ رواں سال اب تک 4,06,000 سے زیادہ برطانوی دولتمند لاکھوں ڈالر  کھوچکے ہیں۔ جون سے اب تک ہربالغ شخص کے اثاثوں کی مالیت میں 33000 سے 2,89,000 ڈالر کمی آئی ہے اور ہربالغ کے اثاثوں کی مالیت 2007 ئ کی نسبت 11 فیصد سے زیادہ کم ہو چکی ہے۔

بینک کے مطابق یورپی یونین سے اخراج کے اثرات معیشت اور عوام دونوں پر بھاری ہیں تاہم اس وقت بھی برطانیہ میں میں 22 لاکھ سے زیادہ ایسے افراد موجود ہیں جن کے اثاثوں کی مالیت ڈالر ملینز سے زیادہ ہے۔یہ تعد دنیا بھر کے ڈالر ملینئرز کے 7 فیصد کے قریب ہے۔

نیوویب ڈیسک< News Source