'دہشت گرد تنظیمیں افغانستان کی سرزمین کو پاکستان کیخلاف استعمال کر رہی ہیں'

'دہشت گرد تنظیمیں افغانستان کی سرزمین کو پاکستان کیخلاف استعمال کر رہی ہیں'

اسلام آباد: ہفتہ وار پریس بریفنگ کے دوران ترجمان دفتر خارجہ نے پاک چین تذویراتی مذاکرات سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ سیکریٹری خارجہ کا چینی ہم منصب سے افغانستان اور دیگر امور پر تبادلہ خیال ہوا۔ ترجمان دفتر خارجہ نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم پر بات کرتے ہوئے کہا کہ کپواڑہ اور دیگرعلاقوں میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں اور بھارت کے نہتے کشمیریوں پر مظالم کی شدید مذمت کرتے ہیں۔ قابض بھارتی افواج کی غیرقانونی کارروائیاں جاری ہیں اور آپریشنز میں 12 کشمیری شہید ہو چکے ہیں۔ ڈاکٹر فیصل نے بتایا کہ لائن آف کنٹرول پر جنگ بندی کی مسلسل خلاف ورزی پر بھارت کے ڈپٹی ہائی کمشنر کو طلب کیا گیا تھا۔


 ترجمان کا کہنا تھا کہ پاکستان کے خلاف دہشتگردی میں بھارتی خفیہ ایجنسی ’را‘ کے افغانستان سے روابط کے ثبوت موجود ہیں۔ پاکستان نے’را‘ کی سرگرمیوں کا معاملہ افغان حکام کے ساتھ اٹھایا ہے۔ ترجمان نے واضح کیا کہ آدھا افغانستان دہشت گردوں کی محفوظ پناہ گاہ بنا ہو ہے جبکہ ٹی ٹی پی، داعش اور جماعت احرار جیسی دہشت گرد تنظیمیں افغانستان کی سرزمین کو پاکستان کیخلاف استعمال کر رہی ہیں۔

ترجمان دفتر خارجہ نے بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کے حوالے سے بتایا کہ بھارت کی جانب سے کلبھوشن کی اہلیہ کی ملاقات کا جواب موصول ہو گیا ہے جس میں بھارت نے کلبھوشن کی والدہ کی بھی ملاقات کرانے کی درخواست کی ہے۔ ترجمان نے بھارت کی جانب سے میڈیکل ویزے کا حصول تقریباً ناممکن بنا دینے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ میڈیکل ویزے کا اجرا انسانی ہمدردی کی بنیاد پر کیا جانا چاہیے۔

ڈاکٹر فیصل نے دوران بریفنگ میں حال ہی میں امریکی کانگریس کی جانب سے منظور ہونے والے بل کے حوالے سے بھی آگاہ کیا اور بتایا کہ بل میں پاکستان کو اتحادی سپورٹ فنڈ کی مد میں مشروط ادائیگیوں کا ذکر ہے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں