پاکستان کو عالمی قرضوں کی ادائیگی میں ریلیف ملنا چاہئے: یو این ڈی پی

پاکستان کو عالمی قرضوں کی ادائیگی میں ریلیف ملنا چاہئے: یو این ڈی پی

نیویارک: اقوام متحدہ (یو این) کے ڈویلپمنٹ پروگرام(یو این ڈی پی) نے کہا ہے کہ پاکستان کو عالمی قرضوں کی ادائیگی میں ریلیف ملنا چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق یو این ڈی پی کے پالیسی میمورینڈم میں کہا گیا ہے کہ پاکستان میں سیلاب سے بڑے انسانی بحران نے جنم لیا ہے اور بہت نقصان ہوا ہے اس لئے قرض فراہم کرنے والے عالمی اداروں اور ممالک کو چاہئے کہ وہ پاکستان کو قرضوں کی واپسی کیلئے ریلیف دیں۔ 

یو این ڈی پی کا کہنا ہے کہ عالمی اداروں کی جانب سے قرض واپسی کیلئے ریلیف ملنے پر پاکستان کو ماحولیاتی تبدیلی کے باعث آنے والے سیلاب کی تباہ کاریوں سے نمٹنے کا موقع مل سکے گا۔ 

یو این ڈی پی کے پیپر میں مزید کہا گیا ہے کہ پاکستان میں سیلاب سے بڑے انسانی بحران نے جنم لیا ہے اور پاکستان کی معیشت کو نقصان پہنچایا ہے، سیلاب سے متاثر پاکستان کو عالمی قرضوں کی ادائیگی معطل کرنی چاہیے۔ 

یو این ڈی پی کا کہنا ہے کہ پاکستان کو چاہئے کہ وہ قرض فراہم کرنے والے اداروں اورممالک سے ادائیگیاں ری شیڈول کرنے کی درخواست کرے جبکہ اس اقدام کا مقصد ماحولیاتی تبدیلی کے باعث ہونے والے بحران اور اس کے نقصان سے نمٹنا ہے۔

یو این ڈی پی پیپر میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کو قرض فراہم کرنے والا سب سے بڑا ملک چین ہے جس نے پاکستان کو بیلٹ اینڈ روڈ ’اینی شی ایٹو‘ کے تحت 30 بلین ڈالرز فراہم کئے ہیں جبکہ دیگر ممالک میں جاپان، فرانس ، ورلڈ بینک اوردیگر کمرشل بونڈ ہولڈرز شامل ہیں۔

مصنف کے بارے میں