عمران خان کی براہ راست کوریج پر عائد پابندی کو چیلنج کر دیا گیا

عمران خان کی براہ راست کوریج پر عائد پابندی کو چیلنج کر دیا گیا

کراچی: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان کی براہ راست کوریج پر پابندی کو سندھ ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا گیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی سندھ کے صدر اور سابق وفاقی وزیر علی زیدی نے سندھ ہائیکورٹ میں درخواست دائر کی جبکہ عدالت نے چیئرمین پی ٹی آئی اور سابق وزیراعظم عمران خان کی لائیو کوریج پر پابندی لگانے کیخلاف درخواست قابل سماعت ہونے پر دلائل طلب کر لئے ہیں۔ 

ذرائع کے مطابق جسٹس جنید غفار کی سربراہی میں 2 رکنی بینچ کے روبرو عمران خان کی لائیو کوریج سے پابندی ہٹانے سے متعلق علی زیدی کی درخواست پر سماعت ہوئی جس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پمرا) کا 20 اگست کا نوٹیفکیشن خلاف قانون ہے۔ 

درخواست میں وزرات اطلاعات و نشریات، چیئرمین پیمرا اور پی بی اے کو فریق بناتے ہوئے کہا گیا ہے کہ لائیو کوریج آزادی اظہار رائے پر پابندی کے مترداف ہے، عدالت اس ضمن میں پیمرا کے نوٹیفکیشن کو غیر قانونی قرار دے اور آئینی درخواست کے فیصلے تک پیمرا نوٹیفکیشن کو معطل کیا جائے۔ 

جسٹس آغا فیصل نے ریمارکس دیئے کہ جس پر پابندی عائد ہے وہ خود درخواست گزار کیوں نہیں؟ پیمرا کا فیصلہ ایک شخص کیخلاف ہے پارٹی کیسے فریق بن سکتی ہے؟ عدالت نے درخواست قابل سماعت ہونے پر دلائل طلب کرتے ہوئے سماعت 26 اگست تک ملتوی کر دی۔ 

مصنف کے بارے میں