کلبھوشن یادیو کی اہلیہ اور والدہ کل پاکستان آئیں گے

کلبھوشن یادیو کی اہلیہ اور والدہ کل پاکستان آئیں گے

لاہور: بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کی اہلیہ اور والدہ کل ملاقات کے لیے پاکستان پہنچیں گی، ملاقات دفتر خارجہ میں رکھی گئی ہے جبکہ ملاقات کا دورانیہ 15 منٹ سے ایک گھنٹے تک ہو سکتا ہے ۔


سفارتی ذرائع کے مطابق بھارت نے کلبھوشن کی اس کے والد اور والدہ سے ملاقات کرانے کا کہا تھا لیکن کلبھوشن نے کہا وہ اپنی اہلیہ سے ملنا چاہتا ہے اور پاکستان نے اس کی خواہش پوری کی۔ کلبھوشن کی بیوی اور والدہ سے متوقع ملاقات کا دورانیہ 15 منٹ سے ایک گھنٹے تک ہو سکتا ہے اور یہ ملاقات دفتر خارجہ میں رکھی گئی ہے۔ سفارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان کے پاس چھپانے کے لیے کچھ نہیں، اگر کچھ چھپانا ہوتا تو بھارتی میڈیا کو کوریج کی پیشکش نہ کی جاتی جب کہ دفتر خارجہ ملاقات کی تصاویر اور ویڈیو بھی جاری کرے گا۔

ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے سوشل میڈیا پر اپنے پیغام میں بتایا کہ بھارت نے کلبھوشن کی والدہ اور اہلیہ کی پاکستان آمد کی تصدیق کردی ہے۔بھارتی جاسوس کی اہلیہ اور والدہ 25 دسمبر کو نجی پرواز کے ذریعے اسلام آباد پہنچیں گی، بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر جے پی سنگھ بھی ان کے ہمراہ ہوں گے۔کلبھوشن یادیو کی اہلیہ اور والدہ ملاقات کے بعد اسی روز بھارت کے لیے واپس روانہ ہو جائیں گی۔

واضح رہے کہ کلبھوشن یادیو کو 3 مارچ 2016 کو بلوچستان کے علاقے سے گرفتار کیا گیا تھا، اس پر پاکستان میں دہشت گردی اور جاسوسی کے سنگین الزامات ہیں اور بھارتی جاسوس نے تمام الزامات کا مجسٹریٹ کے سامنے اعتراف بھی کیا۔