نئے اٹارنی جنرل کی جسٹس قاضی فائز کیخلاف کیس لڑنے سے معذرت

نئے اٹارنی جنرل کی جسٹس قاضی فائز کیخلاف کیس لڑنے سے معذرت
اٹارنی جنرل کا مؤقف ہے کہ اس کیس میں مفادات کا ٹکراو ہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔فائل فوٹو

اسلام آباد: نئے اٹارنی جنرل آف پاکستان بیرسٹر خالد جاوید خان نے جسٹس قاضی فائز عیسی کے خلاف حکومتی ریفرنس لڑنے سے معذرت کر لی۔ حکومت نے سپریم کورٹ میں اپنی مرضی کے دلائل دینے پر سابق اٹارنی جنرل انور منصور خان سے استعفیٰ طلب کر لیا تھا۔


انور منصور خان کی جگہ حکومت نے بیرسٹر خالد جاوید خان کو نیا اٹارنی جنرل تعینات کیا جس کی تین روز قبل صدر مملکت نے منظوری بھی دیدی تھی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اٹارنی جنرل خالد جاوید خان نے سپریم کورٹ میں جسٹس قاضی فائر عیسیٰ سے متعلق کیس میں حکومت کی جانب سے دلائل دینے تھے۔ تاہم اب اطلاعات ہیں کہ اٹارنی جنرل خالد جاوید خان نے حکومتی نمائندگی کرنے سے معذرت کر لی ہے۔

اٹارنی جنرل کا مؤقف ہے کہ اس کیس میں مفادات کا ٹکراو ہے۔ حکومت نے ایڈیشنل اٹارنی جنرل کو مقدمے میں وکیل مقرر کرنے کی درخواست دی ہے۔ عدالت سے استدعا ہے کہ اس درخواست کو قبول کیا جائے۔