وزیراعظم کے خلاف تحریک عدم اعتماد پر پی ڈی ایم تقسیم ہوگئی

وزیراعظم کے خلاف تحریک عدم اعتماد پر پی ڈی ایم تقسیم ہوگئی
سورس:   File photo

لاہور،وزیر اعظم عمران خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد لانے کے معاملے پر پی ڈی ایم اختلافات کا شکار ہوگئی ۔پی ڈی ایم کے پانچ اہم قائدین ان ہاؤس تبدیلی کے مخالف ہیں جبکہ چار قائدین نے حمایت کردی ۔

ذرائع کے مطابق پی ڈی ایم میں شامل جماعتوں کے اکثر قائدین نے سربراہی اجلاس طلب کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔  پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان، محمود خان اچکزئی، ساجد میر،عبدالمالک بلوچ، اویس احمد نورانی ان ہائوس تبدیلی کی مخالفت کی ہےجبکہاختر مینگل ،بلاول بھٹوزرداری اور بلوچستان نیشنل پارٹی اِن ہائوس تبدیلی کے حق میں ہیں، قومی وطن پارٹی کے آفتاب احمد شیر پاؤ ان ہاؤس تبدیلی کے حامی ہیں۔ مسلم لیگ ن نے بلاول بھٹو زرداری کے ان ہائوس تبدیلی کے بیان پر دیکھو اور انتظار کرو کی پالیسی اپنالی ہے۔ن لیگ کےمطابق مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف شروع دن سے ہی ان ہائوس تبدیلی کے مخالف رہے۔یاد رہے کہ اپوزیشن اتحاد، مسلم لیگ ن، پیپلزپارٹی، بلوچستان نیشنل پارٹی، جمعیت علما اسلام، جمیعت علماء پاکستان، نیشنل پارٹی، عوامی نیشنل پارٹی، مرکزی جمیعت اہلحدیث، پختونخواہ ملی عوامی پارٹی، قومی وطن پارٹی پر مشتمل ہے۔