بھارت کا جنگی جنون، ہتھیاروں کی منڈی میں موثر انداز میں اترنے کے لئے کوشاں

بھارت کا جنگی جنون، ہتھیاروں کی منڈی میں موثر انداز میں اترنے کے لئے کوشاں

ماسکو : بھارت روس کے ساتھ فوجی ساز و سامان کی مشترکہ طور پر پیداوار کے ذریعے دنیا میں ہتھیار برآمد کرنے والا بڑا ملک بننے کی کوشش کر رہا ہے۔


بھارتی سرکاری میڈیا کے مطابق بھارت کے وزیر خزانہ و وزیر دفاع ارون جیٹلی نے نوووسی برسک میں ٹیکنوپروم - دو ہزار سترہ کانفرنس میں نئی دہلی - ماسکو کے درمیان وسیع سیکورٹی تعلقات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے روس سے خواہش ظاہر کی ہے کہ وہ ہندوستان کے ساتھ سیکورٹی کے جدید آلات کی مشترکہ طور پر پیداوار میں شریک بنے-

انہوں نے کہا کہ روسی کمپنیاں، بھارت میں دفاعی آلات کی مصنوعات کے مرکز کے قیام میں تعاون کر کے نئی دہلی کی سب سے بڑی پارٹنر بن سکتی ہیں- بھارت، روس کے ساتھ ساڑھے دس ارب ڈالر کے دفاعی معاہدے کو حتمی شکل دے رہا ہے-

اس معاہدے میں روس سے ایس - چار سو میزائل سیکورٹی کے طریقہ کار، چار جنگی جہاز، دو سو کاموو، دو سو چھبیس ٹی ہیلی کاپٹر کی مشترکہ پیداوار اور روس کی دوسری جوہری آبدوز کو کرایے پر لینا شامل ہے-

نیوویب ڈیسک< News Source