پاک فضائیہ کی شہید پائلٹ آفیسر مریم مختار کی شہادت کو دو برس مکمل

پاک فضائیہ کی شہید پائلٹ آفیسر مریم مختار کی شہادت کو دو برس مکمل

اسلام آباد: پاک فضائیہ کی شہید پائلٹ آفیسر مریم مختار کی شہادت کو آج 2 برس بیت گئے۔ مریم مختار 2014ء میں پاک فضائیہ سے بطور فائٹر پائلٹ منسلک ہوئیں۔


ایک انٹرویو میں شہید پائلٹ آفیسر مریم مختار کے والد کا کہنا تھا کہ انہوں نے ایک مرحلے پر مریم کو سمجھایا کہ آپ سلو فلائنگ یا گراؤنڈ پر آ جائیں لیکن مریم کا عزم صرف فائٹر پائلٹ بننا تھا اور وہ اس میں کامیاب رہیں جس پر انہیں بے حد فخر ہے۔ شہید مریم مختار کی والدہ کا کہنا تھا مجھے اپنی بیٹی پر فخر تو ہے لیکن مریم کے بغیر میرا کسی چیز میں دل نہیں لگتا، ہمارے لئے زندگی کے سارے رنگ ختم ہوگئے ہیں یوں معلوم ہوتا ہے جیسے دنیا خالی ہوگئی ہے۔

یاد رہے کہ 24 نومبر 2015ء کو پائلٹ آفیسر مریم مختار اپنے فرائض کے دوران معمول کی پرواز پر تھیں کہ طیارے کے انجن میں آگ لگ گئی اور وہ اس حادثے میں شہید ہوگئیں۔