لاہور کی ٹریفک کو کنٹرول کرنے کیلئے خواجہ سراؤں نے خدمات پیش کر دیں

لاہور: شہر میں ٹریفک کو رواں رکھنے رکھنے کیلئے خواجہ سرا پنکی، ڈولی، ببلی سڑکوں پر آئینگی۔ ٹریفک کی آمدورفت کو موثر انداز میں چلانے کیلئے خواجہ سراؤں نے ٹریفک پولیس کو رضا کارانہ طور پر خدمات پیش کر دیں۔ خواجہ سرا ٹریفک پولیس کے وارڈنز کے ساتھ مل کر آگاہی مہم چلائیں گے۔ لوگوں کو لائن اور لین میں رہنے اور زیبرا کراسنگ کی خلاف ورزی پر نشاندہی کریں گے۔

ٹریفک قوانین کی پاسداری کو یقینی بنانے کیلئے خواجہ سرا اہم شاہراہوں پر شہریوں میں پمفلٹ بھی تقسیم کریں گے۔ دوران ڈرائیونگ ہیلمٹ کا استعمال، سیٹ بیلٹ باندھنا اور قوانین پر عملدرآمد کے حوالے سے ٹریفک اور ڈرائیونگ سے متعلق مفید معلومات، قوانین اور حفاظتی تدابیر کا بھی اندراج پمفلٹ میں درج ہو گا۔

 

میڈیا رپورٹس کے مطابق ٹریفک پولیس اور خواجہ سراؤں میں ٹریفک قوانین کا طریقہ کار طے پا گیا ہے جس پر آئندہ چند روز میں عمل درآمد شروع ہو گا۔ ٹریفک پولیس اور خواجہ سراؤں کے مشترکہ تعاون سے شہر کی ٹریفک کو موثر انداز میں چلایا جائے گا۔ خواجہ سرا کم عمر ڈرائیورز کی حوصلہ شکنی، ٹریفک سگنل کی خلاف ورزی اور دیگر ٹریفک صورتحال پر شہریوں کو زیادہ سے زیادہ آگاہی فراہم کریں گے۔

 

ٹریفک حادثات کی بڑی وجوہات میں تیزی رفتاری، غیر محتاط ڈرائیونگ، سڑکوں کی خستہ حالی، گاڑی میں خرابی، اوورلوڈنگ، ون وے کی خلاف وزری، اوور ٹیکنگ، اشارہ توڑنا، غیر تربیت یافتہ ڈرائیورز، دوران ڈرائیونگ موبائل فون کا استعمال، نوعمری میں بغیر لائسنس کے ڈرائیونگ، بریک کا فیل ہو جانا اور زائد مدت ٹائروں کا استعمال شامل ہے۔ تاہم شہر کی ٹریفک کو رواں رکھنے اور لین، لائن کی پابندی پر عملدرآمد کرانے کیلئے اب ٹریفک پولیس کے وارڈنز اور خواجہ سرا مل کر خدمات انجام دینگے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں