جماعت اسلامی پنجاب کا امریکی وزیرخارجہ کے بیان پر شدید ردعمل

جماعت اسلامی پنجاب کا امریکی وزیرخارجہ کے بیان پر شدید ردعمل

لاہور: امیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمدنے امریکی وزیرخارجہ کے بیان کہ’’پاکستان کو دہشتگردوں کا واضح بتا دیا،تعلقات ان کے خاتمے سے مشروط ہیں‘ پر اپنے رد عمل کااظہار کرتے ہوئے کہاہے کہ جس کا امریکہ دوست بن جائے اسے دشمنوں کی ضرورت نہیں۔امریکہ کی طرف سے دہشتگردی کے خلاف پاکستان کے عوام اور سیکیورٹی فورسز کی قربانیوں کو نظر انداز کرکے ’’ڈومور‘‘کا مطالبہ ناقابل فہم اور شرمناک ہے۔پاکستان ابھی تک افغانستان میں امریکیوں کے ہاتھوں بوئی گئی فصل کاٹ رہا ہے۔جنوبی ایشیا میں تباہی کا ذمہ دار امریکہ اور اس کے حواری ہیں۔

انہوں نے کہاکہ جب تک افغانستان میں بھارت اور امریکہ کا اثرورسوخ قائم رہے گا امن قائم نہیں ہوسکتا۔ضرورت اس امر کی ہے کہ اقوام متحدہ سمیت عالمی برادری پاکستان کی بے مثال قربانیوں کا اعتراف کرے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان کے حکمرانوں کو امریکہ کی کاسہ لیسی ترک کرکے ملک وقوم کے مفادات کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے پالیسیاں مرتب کرنی چاہئیں۔ملک وقوم نازک دور سے گزررہے ہیں۔اب وقت آگیا ہے کہ دشمن قوتوں کی تمام سازشوں کو ناکام بنانے کے لیے ہنگامی اقدامات کیے جائیں۔

انہوں نے کہاکہ پوری قوم جنرل(ر)پرویز مشرف کی بزدلانہ پالیسیوں کا خمیازہ بھگت رہی ہے۔موجودہ حکمران بھی مشرف کی باقیات کاتسلسل ہیں۔ہندوستان ،امریکہ اور اسرائیل ایک سوچی سمجھی سازش کے تحت پاکستان کے اندر تخریب کاری کی وارداتوں میں براہ راست ملوث ہیں اور وہ پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کو ہر صورت میں ناکام بناناچاہتے ہیں۔

میاں مقصوداحمد نے مزید کہاکہ پاکستان کے اندر سیاسی عدم استحکام اور انتشار کی فضادشمنوں کو سازگار ماحول فراہم کرسکتی ہے۔پاکستان کے عزت،وقار اور سلامتی کویقینی بنانے کے لیے مل کر کام کرنا ہوگا۔ جماعت اسلامی شروع دن سے امریکی مداخلت کے خلاف کلمہ حق بلند کرتی چلی آرہی ہے اور انشاء اللہ آئندہ بھی کرتی رہے گی۔غیر ملکی امداد غلامی کی زنجیرہے اس سے چھٹکارہ ضروری ہوچکا ہے۔

مصنف کے بارے میں