اسلام آباد: ہائی کورٹ نے تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری معطل کرکے فریقین کو نوٹسز جاری کردیئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق عمران خان کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری کے خلاف درخواست کی سماعت کے دوران ان کے وکیل بیرسٹربابر اعوان نے عدالت کے سامنے موقف پیش کیا کہ الیکشن کمیشن کو عمران خان کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کرنے کا کوئی اختیار نہیں۔

انھوں نے عدالت سے استدعا کی کہ عمران خان کے وارنٹ گرفتاری سے ان کو ذہنی تکلیف پہنچی اور سیاسی مخالفین بھی اس فیصلے کے بعد عمران خان کوتنقید کا نشانہ بنارہے ہیں لہذٰا عدالت عمران خان کے وارنٹ گرفتاری معطل کرے۔ لارجر بنچ میں شامل جسٹس عامر فاروق، جسٹس محسن اخترکیانی اور جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب نے کیس کی سماعت کی۔
واضح رہے کہ گزشتہ دنوں الیکشن کمیشن نے توہین عدالت کیس میں عمران خان کے خلاف ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کیے تھے جس کے بعد عمران خان نے 26 اکتوبر کو الیکشن کمیشن میں رضاکارانہ طور پر پیش ہونے کا فیصلہ کیا تھا تاہم بعد میں پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان نے اپنا فیصلہ تبدیل کرتے ہوئے الیکشن کمیشن سے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری کے اجرا پر عدالت سے رجوع کیا۔