پنجاب میں چالان فیسوں میں ہوشربا اضافہ کرنے کی تجویز پیش

پنجاب میں چالان فیسوں میں ہوشربا اضافہ کرنے کی تجویز پیش
فائل فوٹو

لاہور :پنجاب پولیس نے ٹریفک کے نظام کو بہتر بنانے کیلئے عوام پر مزید بوجھ ڈالنے کا فیصلہ کرلیا ہے اور اس حوالے سے ٹریفک چالان فیسوں میں ہوشربا اضافے کی تجویز پیش کرتے ہوئے تقریبا 2000 ہزار سے 10 ہزار روپے تک اضافے کی تجویز پیش کی گئی.


جس کے نتیجے میں گاڑی کا چالان 500 روپے کی بجائے 10 ہزار روپے اور موٹر سائیکل کے جرمانے میں 200 روپے کی بجائے 2 ہزار روپے کرنے کی تجویز پیش کی گئی ہے بتایاگیا ہے آئی جی پنجاب پولیس نے سی سی پی او لاہور کے نام لکھے گئے ایک خط میں آئی جی پنجاب محمد طاہر نے تجویز دی ہے کہ جرمانے کی شرح میں دو ہزار فیصد اضافہ ہی ٹریفک کی بحالی کا واحد علاج ہے آئی جی پولیس پنجاب محمد طاہر کے مطابق صوبائی دارالحکومت لاہور کی سٹرکوں پر روزانہ اوسط 6 ہزار سے زائد مرتبہ قانون توڑا جاتا ہے.

قوانین کی خلاف ورزی ہی حادثات، ٹریفک جام اور راستے بند ہونے کا سبب بنتی ہے اس لئے مستقبل قریب میں ٹریفک وارڈنز گاڑی اور جیپ چلانے والے قانون شکن افراد سے دو ہزار فیصد اضافی جرمانہ وصول کریں گے اور موٹرسائیکل سواروں سے ایک ہزار فیصد زیادہ جرمانہ وصول کیا جائے گافیس میں اضافے کے بعد گاڑی اور جیپ چلانے والوں کو 500 روپے کی بجائے 10 ہزار روپے جرمانہ ادا کرنا پڑے گا.

موٹرسائیکل سوار شہریوں کواشارے کی خلاف ورزی پر 200 کی بجائے 2000 روپے جمع کرانا ہونگے پولیس ذرائع کے مطابق آئی جی پنجاب نے جرمانے کی فیس میں اضافے سے متعلق حتمی فیصلہ کرلیا ہے تاہم دیگر ماتحت افسران کی مشاورت کے بعد اس پر عملدرآمد شروع کردیا جائے گا۔