مائیکروسافٹ نے   ونڈوز 11 متعارف کردیں

 مائیکروسافٹ نے   ونڈوز 11 متعارف کردیں

 مائیکروسافٹ نے   ونڈوز 11 کا اعلان کر دیا  ۔ونڈوز 11 میں کئی اہم تبدیلیاں کی  گئی ہیں  ۔ ڈیزائن کے لحاظ سے دیکھا جائے تو   سٹارٹ کے بٹن کو نیچے بائیں جانب سے  نیچے درمیان میں منتقل کیا گیا ہے۔ اس نمیاں تبدلی نے آوٹ لک خوبصورت کردیا ہے ۔ 

دوسری اہم تبدیلی  سرچ  بار کی جگہ میں  نظر آئے گی ۔ سرچ بار کو  سب سے اوپر  کردیا گیا ہے ۔ اس کے نیچے صارفین کی پن کی ہوئی ایپس کے آئیکون   اور ساتھ مجوزہ فائلوں کے لنکس ہونگے۔

سٹارٹ مینو میں فائلوں کی تجاویز صرف ایک کمپیوٹر کے لیے نہیں ہونگی۔ یہ صارف کی تمام ڈیوائسز جیسے فون اور دوسرے کمپیوٹروں پر بھی ایک سی ہونگی۔

ونڈوز 11 میں پیش کیے گئے سنیپ لے آؤٹس(Snap Layouts) فیچر سے صارفین ونڈوز انٹرفیس کو بہتر طریقے سے کسٹو مائز کر سکتے ہیں۔ اور اپنی مرضی  سے لےآؤٹ بھی منتخب کر سکتے ہیں۔

    ئیکروسافٹ ونڈوز 11  میں شامل کی گئی انقلابی تبدیلی اس میں اینڈروئیڈ ایپس کی سپورٹ کا شامل ہونا ہے۔ اب صارفین اینڈروئیڈ ایپس کو مائیکروسافٹ سٹورز سے   کمپیوٹر میں انسٹال کر سکیں گے ۔ 

اس تبدیلی سے صارفین کو دیگر بھاری بھر کم تھرڈ پارٹی  سافٹ وئیر استعمال کرنے کی ضرورت نہیں۔ ونڈوز 11میں اینڈروئیڈ ایپس کی سپورٹ انٹل  کے ساتھ پارٹنر شپ  سے کی گئی  ہے ۔ انٹل بریج ٹیکنالوجی کا بنیادی مقصد اینڈروئیڈ ایپس کو x86 ڈیوائس پر چلنے کے قابل بنانا ہے۔ایک بیان کے مطابق انٹل کے ساتھ شراکت داری کے باوجود یہ فیچر اے ایم ڈی اور اے آر ایم ڈیوائس پر کام کرےگا۔

جلد ہی یہ فیچر  دوسری ڈیوائسز پر بھی کام کرنا شروع کردے گا۔

ونڈوز 11 میں  اپ ڈیٹس 40 فیصد کم سائز میں ہونگی اور تیزی سے انسٹال کی جاسکیں گی ۔ مائیکروسافٹ  نے دعوی کیا ہے کہ ونڈوز 11 سے لیپ ٹاپ کی بیٹری ٹائمنگ  میں بھی بہتری آئے گی۔