ماضی کی خوبصورت اداکارہ ماہیما چوہدری کو پہچاننا اب آسان نہیں

بالی ووڈ کی ماضی کی خوبصورت اداکارہ ماہیما چوہدری موٹاپے کے باعث فلمی دنیا سے دور ہوگئی ہیں اور نامور ہدایتکاروں نے ان سے منہ موڑ لیا ہے۔

ماضی کی خوبصورت اداکارہ ماہیما چوہدری کو پہچاننا اب آسان نہیں

ممبئی: بالی ووڈ کی ماضی کی خوبصورت اداکارہ ماہیما چوہدری موٹاپے کے باعث فلمی دنیا سے دور ہوگئی ہیں اور نامور ہدایتکاروں نے ان سے منہ موڑ لیا ہے۔


بالی ووڈ کی اداکارہ ماہیما چوہدری نے فلمی کیریئر کا آغاز 1997 میں ریلیز ہونے والی شاہ رخ خان کی فلم ’’ پردیس‘‘ سے کیا اور خوب شہرت حاصل کی جس کے بعد انہوں نے متعدد فلموں میں اداکاری کے جوہر دکھائے جس میں ’’دھڑکن‘‘، کھلاڑی 420‘‘ اور’’دل کیا کرے‘‘ شامل ہیں لیکن اس کے باوجود اپنی پہلی فلم سے کامیابی کا سفر شروع کرنے والی ماہیما چوہدری زیادہ عرصے تک فلمی دنیا پر حکمرانی نہ کرسکیں۔

اداکارہ ماہیما چوہدری نے 2006 میں معروف بزنس مین بوبی مکھرجی سے شادی کرلی تھی جس کے 2 سال بعد ہی انہوں نے فلمی دنیا سے کنارہ کشی اختیار کرلی اور طویل عرصہ سلور اسکرین سے غائب رہیں جب کہ اداکارہ نے اپنے شوہر سے کنارہ کشی کے بعد 2016 میں شہرہ آفاق شینا بورا قتل کیس پر بننے والی بنگالی فلم ’’ڈارک چاکلیٹ‘‘ سے واپسی کی ہے جس میں ان کے بدلتے روپ نے سب کو حیران کردیا ہے۔

ماہیما چوہدری کا شمار خوبصورت اداکاراؤں میں ہوتا تھا لیکن گزشتہ دنوں ان کی تصویر میں بدلتے روپ نے سب کو حیران کردیا جس میں بڑھتی عمر کے ساتھ ساتھ ان کی خوبصورتی بھی ڈھلتی نظر آرہی ہے اور وزن میں اضافے کے ساتھ وہ موٹاپے کا بھی شکار ہوچکی ہیں۔

ماضی کی خوبصورت اداکارہ ماہیما چوہدری متعدد باربڑی فلم میں کام کرنے کی خواہش کا اظہار کرچکی ہیں لیکن موٹاپے کے باعث فلم انڈسٹری کے ہدایتکاروں نے ان سے منہ موڑ لیا ہے اس لیے وہ اب تک کوئی بڑی فلم حاصل کرنے میں ناکام ہیں۔