سندھ کے ڈاکٹرز کی تنخواہیں پنجاب کے برابر کرنے کی منظوری

سندھ کے ڈاکٹرز کی تنخواہیں پنجاب کے برابر کرنے کی منظوری
نئی تنخواہ کا اطلاق فروری 2019 سے ہو گا۔۔۔۔۔۔۔فائل فوٹو

کراچی: سندھ کابینہ نے ڈاکٹرز کی تنخواہیں پنجاب کے برابر کرنے کی منظوری دے دی۔ وزیراعلیٰ سندھ کی زیرصدارت سندھ کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں سندھ کے ڈاکٹروں کے سروس اسٹرکچر اور تنخواہوں کے فارمولے پر غور کیا گیا۔


سندھ کابینہ نے ڈاکٹروں کے لیے نیا سیلری پیکج پنجاب کے برابر کرنے کی منظوری دے دی۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ قانون سازی کے بعد ڈاکٹروں کی تنخواہوں میں اضافہ کیا جائے گا اور نئی تنخواہ کا اطلاق فروری 2019 سے ہو گا۔

نئے پیکج کے تحت 10 ہزار روپے ماہانہ پوسٹ گریجویٹ کو اضافی دیا جائے گا جب کہ 15 ہزار فی مہینہ تمام ہاؤس افسران کو اضافی دیا جائے گا۔

کابینہ کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ تمام الاؤنسز اور تنخواہوں کے جائزہ کے بعد 5.6 بلین سالانہ خزانے پر بوجھ ہو گا۔

کابینہ کے اجلاس میں بیشتر ممبران نے ڈاکٹرز کی تنخواہ بڑھانے کو اچھی کارکردگی سے منسوب کرنے کی تجویز دی۔

ترجمان وزیراعلیٰ کے مطابق مراد علی شاہ نے مزید ڈاکٹروں کے تقرر کی بھی منظوری دی۔ نئے ڈاکٹرز کی نئی بھرتی مخصوص اسپتالوں میں ہو گی جہاں سے ٹرانسفر نہیں ہو سکے گا۔

خیال رہے کہ گزشتہ دنوں سندھ بھر کے ینگ ڈاکٹرز نے تنخواہوں اور مراعات میں اضافے کے لیے احتجاجاً کام چھوڑ ہڑتال کی تھی جس کے بعد صوبائی حکومت اور ینگ ڈاکٹرز کے درمیان مذاکرات میں معاملات طے پائے تھے۔