کوئٹہ: سابق صدر بار کامران مرتضی کی عدالتیں بند کروانے کی دھمکی

کوئٹہ : سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے سابق صدر کامران مرتضی کی ساتھی وکلا کے ہمراہ پریس کانفرنس بلوچستان ہائی کورٹ میں آسامیوں کی میرٹ پر تعیناتیوں کو ناقابل قبول قراردیتے ہوئے عدالتیں بند کروانے کی دھمکی دے دی۔

کوئٹہ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے سابق صدر سپریم کورٹ بار ایسوسیشن کامران مرتضی کا کہنا تھا کہ بلوچستان ہائی کورٹ میں آسامیوں پر تعیناتیوں کیلئے کوٹہ سسٹم ختم کرنے سے چھوٹے علاقوں کی حق تلفی ہو گی لہذا ہائی کورٹ میں تعیناتیوں کیلئے کوٹہ سسٹم بحال کیا جائے انہوں نے دھمکی دی کہ اگر 10 دن کے اندر مطالبات پر عملدرآمد نہیں ہوا تو عدالتیں بند کرنے جیسے اقدامات اٹھائے جاسکتے ہیںسئینر قانون دان کامران مرتضی کا کہنا تھا کہ ریکوڈیک کے حوالے سے بلوچستان کے عوام کو سہانے خواب دیکھائے گئے وفاقی اورصوبائی حکومت ریکوڈک کیس ہار چکی ہے اب معاوضے کی ادائیگی کا فیصلہ ہونا ہے، 

مصنف کے بارے میں