'پاکستان گھبراتا نہیں بھارت سے بات چیت کے ذریعے معاملات حل کیے جا سکتے ہیں'

'پاکستان گھبراتا نہیں بھارت سے بات چیت کے ذریعے معاملات حل کیے جا سکتے ہیں'
وزیراعظم کا دورۂ سعودی عرب انتہائی کامیاب رہا، ترجمان دفتر خارجہ۔۔۔۔۔۔فائل فوٹو

اسلام آباد: ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر فیصل کا کہنا ہےکہ پاکستان بھارت سے بات چیت سے گھبراتا نہیں اور بات چیت کے ذریعے ہی معاملات حل کیے جا سکتے ہیں۔


دفتر خارجہ میں ہفتہ وار بریفنگ دیتے ہوئے ترجمان ڈاکٹر فیصل نے کہا کہ وزیراعظم کا دورۂ سعودی عرب انتہائی کامیاب رہا اور وزیراعظم نے شاہ سلمان بن عبدالعزیز کو دورۂ پاکستان کی دعوت بھی دی۔ سعودی عرب نے 6.2 ارب ڈالر کا پیکج دیا اور پاکستانیوں کیلئے ویزا فیس 2 ہزار سے 300 ریال کر دی جائے گی۔

ترجمان دفتر خارجہ نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان اپنے چین کے پہلے دورے پر 2 سے 5 نومبر کو سرکاری دورے پر چین جائیں گے۔ وزیراعظم چینی صدر شی جن پنگ اور ہم منصب سے ملاقاتیں کریں گے جب کہ شنگھائی کانفرنس میں خصوصی شرکت بھی کریں گے۔

ڈاکٹر فیصل نے مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پر بات کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی قابض فوج نے 20 نہتے کشمیریوں کو شہید کیا اور پاکستان کشمیر میں غمزدہ خاندانوں کے ساتھ کھڑا ہے۔

پاک بھارت مذاکرات سے متعلق ترجمان کا کہنا تھا کہ پاکستان بھارت سے بات چیت سے گھبراتا نہیں اور بات چیت کے ذریعے ہی معاملات حل کیے جاسکتے ہیں۔

ڈاکٹر فیصل نے کہا کہ بھارتی شہریوں کی جانب سے پاکستانی حدود میں جہاز یرغمال بنائے جانےکا علم نہیں۔ترجمان دفتر خارجہ نے ایک بار پھر قندھار واقعے کی مذمت کرتے ہوئے افغانستان کے الزامات کو مسترد کر دیا۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان نے تاحال کوئی ٹھوس شواہد نہیں دیئے اور افغانستان میں دیرپا امن کے لیے پاکستان اور امریکا کوشاں ہیں۔

ڈاکٹر فیصل کا کہنا تھا کہ پاکستان پر کسی ملک کی جانب سے کسی دباؤ کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا جبکہ پاکستان اپنے ملکی مفادات کی خاطر اقدامات کرتا آیا ہے اور کرتا رہے گا۔