حکومت کس منہ سے احتساب کی بات کر رہی ہے، مولانا فضل الرحمان

حکومت کس منہ سے احتساب کی بات کر رہی ہے، مولانا فضل الرحمان
یمن کے معاملے میں ثالثی کرنے والے پہلے اپنے مسائل حل کریں، مولانا فضل الرحمان۔۔۔۔۔۔۔فائل فوٹو

اسلام آباد: جے یو آئی ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا اے پی سی کی تجویز سے ہی وزیراعظم کے اوسان خطا ہو گئے۔ حکومت کس منہ سے احتساب کی بات کر رہی ہے اور سیاسی انتقام والا احتساب نہیں ہونے دیں گے۔


ان کا مزید کہنا تھا کہ اپوزیشن جماعتوں سے رابطے آخری مرحلے میں ہیں اور ملک میں احتساب نہیں ہو رہا جبکہ صرف سیاسی انتقام ہے جو ان کی مانے وہ صاف جو نہ مانے وہ کرپٹ۔ انہوں نے کہا یمن کے معاملے میں ثالثی کرنے والے پہلے اپنے مسائل حل کریں، سعودی عرب مہربانی کر رہا ہے لیکن آپ کی ملک چلانے کی صلاحیت کہاں گئی۔

مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ بین الاقوامی سرمایہ کاری کانفرنس میں حکومتی موقف سے پاکستان کی جگ ہنسائی ہوئی اب خیرات ہی مل سکتی ہے۔ انہوں نے کہا نواز شریف نے اے پی سی کی تاریخ طے کرنے کے لیے دو، تین دن مانگے ہیں جبکہ اسمبلیوں میں آنے کے بعد اب احتجاج کا قانونی اور آئینی راستہ ہی اختیار کریں گے۔