بھارت میں خاتون نے بدتمیزی کرنے پر ٹریفک پولیس اہلکار کی درگت بنا ڈالی

Indian , woman, traffic police, beat
Indian , woman, traffic police, beat

نیو دہلی: بھارت میں ایک خاتون نے بدتمیزی کرنے پر ٹریفک پولیس اہلکار کی بھرے مجمعے میں درگت بنا ڈالی۔

بھارتی اخبار کی سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر ڈالی گئی ایک ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ خاتون ایک ٹریفک پولیس اہلکار کو بری طرح پیٹ رہی ہے، ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی، ویڈیو میں خاتون نے ٹریفک پولیس اہلکار کو گریبان سے پکڑ رکھا ہے اور اس پر تھپڑوں کی بارش کر رہی ہے۔

ویڈیو میں پاس کھڑا ایک دوسرا پولیس اہلکار اور عوام صورتحال میں بے بس دکھائی دے رہے ہیں، بھارتی میڈیا کے مطابق بدتمیزی کرنے اور گالیاں دینے پر خاتون نے ٹریفک پولیس اہلکار کو تشدد کا نشانہ بنایا ۔

ادھر مسلمانوں کیساتھ مذہبی تعصب اور امتیازی سلوک کا ایک اور افسوسناک واقعہ بھارتی ریاست اترپردیش میں پیش آیا۔ انتظار علی نامی اس مسلمان پولیس افسر نے اسلامی تعلیمات پر عمل پیرا ہوتے ہوئے داڑھی رکھی ہوئی تھی۔ تاہم افسران بالا کو اس کا یہ حلیہ پسند نہیں تھا۔ اسے داڑھی کٹوانے پر مجبور کیا گیا، انکار پر نوکری سے ہی نکالنے کی دھمکی دی گئی۔

بھارتی ریاست اترپردیش پولیس افسران کا موقف ہے کہ داڑھی رکھنے کیلئے اجازت کی ضرورت ہے، انتظار علی نے بغیر اجازت کے داڑھی رکھی جس کی وجہ سے اسے معطل کیا گیا۔ پولیس مینوئل کے مطابق صرف سکھوں کو داڑھی رکھنے کی اجازت ہے جب کہ دیگر پولیس اہلکاروں کو چہرہ صاف ستھرا رکھنا ضروری ہے۔

دوسری جانب مسلمان پولیس افسر نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ اس نے متعدد مرتبہ اعلیٰ حکام سے اجازت طلب کی لیکن کسی نے جواب تک دینا گوارا نہیں کیا گیا۔ اس سلسلے میں آخری درخواست نومبر 2019ء کو دی تھی لیکن کوئی جواب نہ دیا گیا بلکہ الٹا نوکری سے ہی نکال دیا گیا۔

تعصب کا نشانہ بننے والے پولیس افسر انتظار علی کا کہنا ہے کہ وہ گزشتہ 25 برس سے اترپردیش میں اس محکمہ سے منسلک ہے لیکن کسی نے بھی اسے ماضی میں داڑھی رکھنے سے نہیں روکا۔ وہ 1994ء میں بطور کانسٹیبل پولیس میں بھرتی ہوئے تھے۔