اتر پردیش، مسلم لڑکے کے ساتھ چائے پینے پر لڑکی کی پٹائی

اتر پردیش، مسلم لڑکے کے ساتھ چائے پینے پر لڑکی کی پٹائی

اتر پردیش: بھارت میں ہندو انتہا پسند جماعت بی جے پی کی رہنما نے مسلم لڑکے کے ساتھ چائے پینے پر لڑکی پر تھپڑوں کی بارش کر دی۔  واقعے کی وڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست اتر پردیش کے شہرعلی گڑھ میں بی جے پی کی وومن ونگ سے تعلق رکھنے والی رہنما سنگیتا وارشے نے لڑکی کو اس وقت تشدد کا نشانہ بنایا جب وہ ہوٹل پر ایک لڑکے کیساتھ چائے پی رہے تھی۔

واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد عوام نے سنگیتا وارشے کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ میڈیا کے رابطہ کرنے پر بی جے پی رہنما سنگیتا وارشنے کا کہنا تھا کہ ان کو مسلمانوں سے کوئی مسئلہ نہیں لیکن مسلمان لڑکے ہندو لڑکیوں کو ورگلاتے ہیں اور جو کچھ انہوں نے کیا انہیں اس پر فخر ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ مجھے دوبارہ ایسا کرنے پر بھی کوئی شرمندگی نہیں ہو گی۔

 

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں