فوج اور عدلیہ کو نیچا دکھانے کی نوازشریف کی سازش ناکام ہو گی: چودھری شجاعت حسین

لاہور:  پاکستان مسلم لیگ کے صدر و سابق وزیراعظم چودھری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ فوج اور عدلیہ کو نیچا دکھانے کی نوازشریف کی گھناؤنی سازش انشاء اللہ ناکام ہو گی.

چودھری ظہورالٰہی شہید   کی برسی پر گجرات میں ہر ضلع  اور علاقہ سے آنے والے ہزاروں افراد کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے چودھری پرویزالٰہی نے کہا کہ ماڈل ٹاؤن لاہور میں قتل عام کے مجرم شہبازشریف اور رانا ثناء اللہ ہیں ان کو سزائیں ملیں تو آئندہ کسی کو بیگناہ شہری کو خون میں نہلانے کی جرات نہیں ہو گی۔ چودھری وجاہت حسین اور حسین الٰہی بھی تقریب میں شریک تھے۔ شرکا شہید جمہوریت چودھری ظہورالٰہی کے حق میں نعرہ بازی کرتے رہے۔

اپنے خطاب میں  چودھری شجاعت حسین نے مزید کہا میں نے آج تک پاکستان میں اتنا برا وقت نہیں دیکھا، نوازشریف نے ذاتی انا کیلئے ہر وہ کام کرنے کی کوشش کی جو ان کے حق میں اور ملک کے خلاف ہو۔ انہوں نے کہا کہ ہر جگہ گو نواز گو ہو رہا ہے، مسجد نبوی میں بھی چور چور کے نعرے لگ گئے اس سے زیادہ اور کیا بے عزتی ہو سکتی ہے، انہیں اپنا نہیں تو اپنے مرحوم والد کا ہی خیال کرنا چاہئے، نوازشریف نے تو اپنی بیٹی کو بھی نہیں معاف کیا، جعلی دستاویزات پر اس کے دستخط کروا لیے اور پھر کہتے ہیں کہ مجھے کیوں نکالا۔

چودھری شجاعت حسین نے کہا کہ سپریم کورٹ اور فوج دو ایسے ادارے ہیں جن پر جتنا فخر کیا جائے کم ہے لیکن نوازشریف نے ان دونوں اداروں کو بدنام کرنے کی بہت کوشش کی، سپریم کورٹ پر آفرین ہے کہ وہ ساری چیزیں بڑے حوصلے کے ساتھ برداشت کر رہی ہے، میں آج پیشگی کہہ رہا ہوں کہ نئے دن آنے والے ہیں اور حالات جلد تبدیل ہو جائیں گے۔

چودھری پرویزالٰہی نے برسی کے شرکا کا دلی طور پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ  پچیس سال سے ن لیگ حکومت میں ہے پھر بھی ان کی جگ ہنسائی ہو رہی ہے، خود ہی میچ کرواتے ہیں لیکن اس میں اور جہاں بھی جاتے ہیں چور چور کے نعرے لگتے ہیں، ایسی دولت اور حکمرانی کا کیا فائدہ جس میں عزت ہی نہ رہے، شہبازشریف چھوٹو گینگ سمجھتا ہے کہ ان کو ماڈل ٹاؤن کے 14 شہیدوں کے خون کی سزا نہیں ملے گی، مجھے اللہ تعالیٰ پر یقین ہے اس لیے میں کہتا ہوں کہ شہبازشریف اور ان کے حواریوں کو رانا ثناء اللہ اور سابق آئی جی پولیس سمیت ایسی سزا ضرور ملے گی کہ تاریخ یاد رکھے گی، اللہ کی قدرت دیکھیں کہ اب سارا ٹبر ہی چور ہو گیا ہے، نوازشریف کی اپنی تقریریں ہی ان کے خلاف گواہی بن رہی ہیں۔

چودھری پرویزالٰہی نے کہا کہ چین میں 48کروڑ روپے فی کلومیٹر اور بھارت میں 25کروڑ فی کلومیٹر بننے والی جنگلہ بس انہوں نے لاہور میں ایک ارب دس کروڑ اور اور اسلام آباد میں 2 ارب روپے فی کلومیٹر میں بنائی، ورلڈ بینک کی رپورٹ میں ہے کہ شہبازشریف نے پنجاب کا 63 فیصد بجٹ صرف لاہور پر لگایا ہے جس سے باقی صوبہ محرومی کا شکار ہے۔ چودھری پرویزالٰہی نے مزید کہا کہ نوازشریف بار بار کہہ رہے ہیں کہ مجھے کیوں نکالا انہیں آج تک سمجھ نہیں آئی کہ کرپشن، غریب عوام کا خون چوسنے اور ظلم کرنے کی بنا پر نکالا گیا بلکہ عوام نے تو شریف خاندان کو دلوں سے نکال دیا ہے، شریف خاندان اور ان کے حواریوں نے ملک کو لوٹا اور اپنا خزانہ بڑھایا، گجرات شہر کا حال پہلے سے بھی برا ہے، یہاں اربوں روپے ’’خرچ‘‘ کیے گئے تاکہ بارش میں کشتیاں چلائی جائیں، ملکی معیشت کا بیڑہ غرق کر دیا گیا ہے، ن لیگ نے 25 سال حکومت کی لیکن آج تک ایک میگاواٹ بجلی پیدا نہیں کی آج بھی ملک میں 4ہزار میگاواٹ کا شارٹ فال ہے، نوازشریف اپنا سارا پیسہ باہر لے جا چکے ہیں اور ان کے پنے ارکان اسمبلی بھی رو رہے ہیں کہ ہمارے ساتھ کیا ہو گیا۔

اس موقع پر چودھری ظہیرالدین نے کہا کہ نوازشریف ، شہبازشریف سانحہ ماڈل ٹاؤن کے ذمہ دار ہیں، چودھری ظہورالٰہی نے جمہوریت کیلئے اپنی جان قربان کر دی۔ سردار آصف نکئی، ریاض اصغر چودھری، سعادت نواز اجنالہ، ڈاکٹر زین علی بھٹی، چودھری طاہر ترکھا، امتیاز رانجھا، چودھری مقصود گجر، چودھری عبداللہ یوسف، خالد اصغر گھرال، رحمن نصیر، پرویزاختر پگانوالہ، مخدوم بابر، ذوالفقار پپن، حق نواز سنگلہ اور دیگر مسلم لیگی رہنما سٹیج پر موجود تھے۔ چودھری شجاعت حسین، چودھری پرویزالٰہی، چودھری وجاہت حسین کے بھی قد آور پوسٹر لگائے گئے تھے۔

مصنف کے بارے میں