رمضان المبارک میں دفتری اوقات تبدیل کرنے کیلئے سمری وزیراعظم کوموصول

رمضان المبارک میں دفتری اوقات تبدیل کرنے کیلئے سمری وزیراعظم کوموصول

اسلام آباد:رمضان المبارک میں دفتری اوقات کا شیڈول تبدیل کرنے کے لیے سمری وزیراعظم آفس کو موصول ہو گئی ہے ۔


میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ وزارت داخلہ کی طرف سے سمری رمضان المبارک میں وفاقی سیکرٹری سیکرٹریٹ اور دارالحکومت کے دفتروں کے اوقات کار تبدیل کرنے کے لیے بھجوائی گئی۔سمری میں وزیراعظم عمران خان کو پیر سے جمعرات کے دوران صبح 9 بجے سے 3 بجے تک جب کہ جمعہ کو صبح 8 بجے سے ایک بجے تک دفتری اوقات مقرر کرنے کی تجویز پیش کی گئی ہے۔

وزیراعظم کی منظوری کے بعد وزارت داخلہ رمضان المبارک کے لیے دفتری اوقار کار کا باضابطہ نوٹیفیکشن جاری کر دے گی۔جب کہ دوسری جانب رمضان المبارک میں بجلی کی زیادہ سے زیادہ فراہمی اور کم سے کم لوڈ شیڈنگ کے حوالے سے حکومت نے منصوبہ بندی کر لی گئی ہے۔حکومت نے رمضان میں بجلی کی لوڈشیڈنگ کو کم رکھنے اور صنعت کو زیادہ سے زیادہ بجلی کی فراہمی کے حوالے سے بیک اپ پلان تیار کر لیا ہے۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق ذرائع نے بتایا کہ وزیر اعظم عمران خان نے بیک اپ پلان کے حوالے سے سختی سے ہدایت جاری کی ہے کہ اس مرتبہ لوڈشیڈنگ کم از کم ہونی چاہئیے۔

خیال رہے پاکستان سمیت دنیا کے بیشتر حصوں میں رمضان المبارک کا چاند 5 مئی (29 شعبان) کو نظر نہ آنے کے قومی امکانات ہیں۔جب کہ سعودی اور اس کے ہمسایہ ممالک میں 5 مئی کو یہی چاند کی رویت ہو گی۔تاہم پاکستان اور خطے کے دیگر ممالک میں پہلا روزہ منگل 7 مئی کو ہو گا۔