ریڈیو پاکستان کے ملازمین کا احتجاج، عمارت لیز پر دینے کا فیصلہ واپس لے لیا گیا

ریڈیو پاکستان کے ملازمین کا احتجاج، عمارت لیز پر دینے کا فیصلہ واپس لے لیا گیا
image by facebook

اسلام آباد: ریڈیو پاکستان کے ملازمین کا احتجاج کے بعد ریڈیو پاکستان کی عمارت لیز پر دینے کا فیصلہ واپس لے لیا گیا۔


تفصیلات کے مطابق ریڈیو پاکستان کے ملازمین کا احتجاج رنگ لے آیا، پاکستان براڈ کاسٹنگ کارپوریشن نے ریڈیو پاکستان کی عمارت کو لیز پر دینے کا فیصلہ واپس لے لیا ہے، ملازمین نے عمارت کو لیز پر دینے کے خلاف پارلیمنٹ ہاؤس کے سامنے احتجاجاً دھرنا دے رکھا تھا۔

وزیر مملکت برائے پارلیمانی امور علی محمد خان نے تصدیق کرتے ہوئے میڈیا کو بتایا کہ فی الوقت ریڈیو پاکستان کی عمارت کو لیز پر دینے کا فیصلہ واپس لے لیا گیا ہے، وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے ریڈیو پاکستان کو بہترین بنانے کے لیے وزارت سے تجاویز مانگی تھیں۔

علی محمد خان کے مطابق وزارت اطلاعات نے ریڈیو ملازمین سے ادارے کی بہتری کے لیے یکم نومبر تک تجاویز مانگی ہیں، وزیر مملکت کا کہنا تھا کہ ریڈیو پاکستان نے 1965 کی جنگ میں اہم کردار ادا کیا اور فوجی جوانوں کا لہو گرمایا۔

وفاقی وزیر اطلاعات نے ریڈیو پاکستان کی عمارت کو لیز پر دینے کا فیصلہ واپس لیتے ہوئے کہا ہے کہ ریڈیو پاکستان ملازمین کو اعتماد میں لیے بغیر کوئی اقدام نہیں اُٹھائیں گے۔

ریڈیو پاکستان جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے رہنماؤں کا کہنا تھا کہ وزیر اطلاعات سے ایک ماہ کا وقت مانگا ہے تاکہ ادارے کی بحالی کے لیے پروپوزل پیش کرسکیں، ہم تحریک انصاف حکومت کو مایوس نہیں کریں گے بلکہ ایسا منصوبہ دیں گے جس سے ادارہ منافع بخش ہوسکے۔

رہنماؤں کا کہنا تھا کہ مذاکراتی عمل کے دوران وزیر اطلاعات نے یقین دہانی کرائی ہے کہ یہ عمارت آپ کے پاس ہی رہے گی اور آپ ہی اس میں مقیم رہیں گے، ذرائع ابلاغ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے الیکشن کمیٹی رہنماؤں نے کہا کہ ریڈیو ملازمین کے معاملہ کو کور کیا گیا جس سے یہ جلد حل ہوا۔