شہباز اور حمزہ مفاہمتی, مریم نواز جارحانہ سیاست کریں گی: معاملات طے

شہباز اور حمزہ مفاہمتی, مریم نواز جارحانہ سیاست کریں گی: معاملات طے
کیپشن:   شہباز اور حمزہ مفاہمتی مریم نواز جارحانہ سیاست کریں گی: شریف خاندان میں معاملات طے سورس:   file

لاہور(زبیر ساجد) مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کی رہائی کے بعد مسلم لیگ ن کی قیادت کے حوالے سے شریف خاندان میں سیاسی معاملات طے پاگئے ہیں۔ پارٹی کی قیادت شہباز شریف ہی کریں گے۔پنجاب کے معاملات حمزہ شہباز شریف دیکھیں گے۔شہباز شریف اور حمزہ شہباز مصلحانہ انداز جاری رکھیں گے جبکہ مریم نواز جارحانہ رویہ ہی برقرار رکھیں گی۔

نیو نیوز نے مسلم لیگ کے ذرائع کے حوالے بتایاکہ  پارٹی کو جب جہاں مریم نواز کی ضرورت ہوگی وہ اپنا کردار ادا کریں گی۔مریم نواز اپنے چچا اور کزن حمزہ شہباز سے مشاورت کے ساتھ پارٹی معاملات کو دیکھیں گی۔

ذرائع کے مطابق مریم نواز پارٹی کے وفاقی معاملات، سوشل میڈیا اور عوامی رابطوں کو بہتر بنانے پر کام کریں گی۔مریم نواز عوامی جلسوں،ریلیوں اور کارنر میٹنگز سے خطاب کریں گی۔شہباز شریف اور حمزہ پارلیمانی معاملات کے نگہبان ہوں گے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ شریف خاندان کی تینوں افراد پارٹی کے اہم معاملات میں نواز شریف سے مشاورت کے پابند ہوں گے۔پارٹی میں کسی بھی معاملے میں حتمی فیصلہ قائد ن لیگ نواز شریف ہی کریں گے۔

واضح رہے کہ شہباز شریف کی منی لانڈرنگ کیس میں لاہور ہائیکورٹ سے ضمانت کے بعد کہا جا رہا ہے تھا کہ شریف خاندان میں پارٹی قیادت کے حوالے سے اختلافات ہیں ۔شہباز شریف کی رہائی کے بعد مریم نواز خاموش بھی ہوگئی ہیں تاہم اب خاندانی ذرائع کا کہنا ہے کہ معاملات طے پاگئے ہیں۔