اسلام آباد: دیکھا جائے تو پاکستانی شائقین کو سال 2016میں بالی ووڈ فلمیں دیکھنے کا زیادہ موقع نہیں ملا جس کی بڑی وجہ پاک بھارت کشیدہ تعلقات تھے ۔ماہرین کی رائے کے مطابق بالی ووڈ فلمیں یکسانیت کا شکار ہو چکی ہیں یہی وجہ ہے کہ دیکھنے والوں کی دلچسپی کچھ زیادہ دکھائی نہیں دیتی۔اور جو فلمیں کامیاب ہوتی ہیں ان کی کامیابی کی بڑی وجہ ان میں موجود ناموربالی ووڈ اداکار ہوتے ہیں۔ایسی فلموں کی ریلیز سے پہلے ہی 50فیصد کامیابی یقینی ہوتی ہے۔

سال 2016میں ریلیز ہونے والی چند ایسی فلمیں جنہوں نے نہ صرف ناقدین بلکہ شائقین کو بھی خاصا مایوس کیا۔

1.مہنجودڑو

بالی ووڈ کے ورسٹائل ڈانسر ہرتیک روشن کے مرکزی کردار پر مبنی یہ ایک رومانوی و تاریخی فلم تھی فلم کی کہانی تو غیر متاثر کن تھی ہی اداکاروں کی اداکاری نے بھی جوہر نہ دکھائے۔

2.اے فلائنگ جٹ

کمانڈر سیف گارڈ سے ملتی جلتی یہ فلم ٹائیگر شروف کی تھی اور نہ صرف فلم کی کہانی کافی مضحکہ خیز ثابت ہوئی بلکہ فلم کے تشہیری پوسٹر کو دیکھ کر اڑتے ہوئے کمانڈر سیف گارڈ کا گمان ہوتا ہے۔

3.فتور

انگریزی ناول ”گریٹ ایکسپیکٹیشنز“ پر مبنی یہ فلم بالی ووڈ باربی ڈول کترینہ کیف کی تھی ۔ٹریلر میں موجود کشمیر کے خوبصورت مناظر کو دیکھ کر لگتا تھا کہ یہ فلم کامیاب ہو ہی جائے گی لیکن ایسا کچھ نہ ہوا اور نہ فلم کی کہانی متاثر کر سکی اور نہ ہی کترینہ کی اداکاری اور اداﺅں نے جوہر دکھائے۔

4.بار بار دیکھو

اس فلم کا نام تو ”کبھی نہ دیکھو“ ہونا چاہیے تھا لیکن نہ جانے کیا سوچ کر اس فلم کا نام بار بار دیکھو رکھا گیا۔یہ فلم بھی کترینہ کیف کی تھی اور سدھارتھ ملہوترا ہیرو کا کردار نبھا رہے تھے۔روایتی رومانوی کہانی اور شادی کی جدوجہد پر مبنی یہ فلم انتہائی بری ثابت ہوئی۔

5.صنم تیری قسم

پاکستانی اداکارہ ماورا حسین اور ہرش وردھن کی یہ فلم کہانی کے اعتبار سے تو خاصی مایوس کن رہی لیکن ماورا کی اداکاری کو اچھی پذیرائی ملی اور فلم کے کچھ گانے بھی زبان زد عام رہے جن میں سر فہرست ”تو کھینچ میری فوٹو“ تھا۔

فین

بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان کی فلم فین نے دیکھنے والوں کو کچھ خاص متاثر نہیں کیا اور ناقدین نے شاہ رخ کے دوہرے کردار کو بھی خاصی تنقید کا نشانہ بنایا۔فلم کی کہانی ایک ایسے فین کے گرد گھومتی ہے جو ایک فلمی ستار ے کے لیے اپنی جان کی بازی لگا دیتا ہے۔