پاکستان میں خود کو کبھی غیر محفوظ تصور نہیں کیا، مکی آرتھر

پاکستان میں خود کو کبھی غیر محفوظ تصور نہیں کیا، مکی آرتھر
پاکستان  کے کلچر سے بہت متاثرہوں،جس میں ایک دوسرے کی بہت عزت کی جاتی ہے،فوٹو بشکریہ سپورٹنگ نیوز

 پاکستان کرکٹ ٹیم  ہیڈ کوچ کی خصوصی گفتگو


لاہور: پاکستان کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھرنے کہا ہے کہ انہوں نے خود کو پاکستان میں کبھی غیر محفوظ تصور نہیں کیا بلکہ انہیں یہاں بہت پیار ملا ہے۔نجی ٹی وی سے  بات کرتے ہوئے مکی آرتھر کا کہنا تھا کہ وہ یہاں کے کلچر سے بہت متاثر ہوئے  ہیں جس میں ایک دوسرے کی بہت عزت کی جاتی ہے، کھلاڑی بڑوں کی عزت کرتے ہیں اور یہ سب کچھ میرے کلچر سے ذرا مختلف ہے۔

مکی آرتھر کا کہنا تھا کہ کھلاڑیوں کے اقدار اور اخلاق بہترین ہے اور وہ اسے انجوائے کرتے ہیں،مکی آرتھر نے بتایا کہ انہوں نے کچھ اردو کے الفاظ بھی سیکھ لیے ہیں جیسے پانی، شکریہ اور کچھ ایسے ہیں جو ٹی وی پر نہیں بتا سکتے۔لاہور کی تعریف کرتے ہوئے مکی آرتھر نے کہا کہ لاہور مختلف ثقافتوں والا شہر ہے جہاں اچھے ریسٹورینٹ اور کھانے ہیں اور خاص طور پر بریانی جو وہ کھلاڑیوں کو زیادہ کھانے نہیں دیتے کیوں کہ یہ اسکن کے لیے اچھی نہیں۔عمر اکمل سے متعلق سوال پر مکی آرتھر کا کہنا تھا کہ اب میں خاموش رہوں گا کیوں کہ اگر کوئی بات کی تو ہیڈ لائنز بن جائے گی۔

کیا آپ پاکستانی میڈیا سے خوش ہیں کے سوال پر مکی آرتھر کا کہنا تھا کہ کئی صحافی بہت اچھے ہیں مگر کچھ مشکلات پیدا کرنے والے بھی ہیں۔