اوورسیز پاکستانیوں کیلئے ووٹنگ کے طریقہ کار پر آئینی ترمیم کیخلاف درخواست مسترد

اوورسیز پاکستانیوں کیلئے ووٹنگ کے طریقہ کار پر آئینی ترمیم کیخلاف درخواست مسترد

اسلام آباد: اسلام آباد ہائیکورٹ نے اوورسیز پاکستانیوں کیلئے ووٹنگ کے طریقہ کار پر آئینی ترمیم کے خلاف پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی درخواست مسترد کر دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ نے اوورسیز پاکستانیوں کی ووٹنگ کے طریقہ کار پر آئینی ترمیم کیخلاف پی ٹی آئی رہنما داؤد غزنوی کی درخواست دلائل سننے کے بعد ناقابل سماعت قراردے کر خارج کر دی۔ 

اسلام آباد ہائیکورٹ نے ریمارکس دئیے کہ عدالت پارلیمنٹ کو قانون سازی کیلئے ہدایات نہیں دے سکتی اور توقع ہے کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) اپنی آئینی ذمہ داری پوری کرے گا اور اوورسیز پاکستانیوں کے ووٹ کیلئے اقدامات اٹھائے گا۔ 

دوران سماعت درخواست گزارکے وکیل نے دلائل پیش کرتے ہوئے کہا کہ اوورسیز پاکستانیوں کے ووٹ کا حق تسلیم کیا جاتا ہے لیکن دیا نہیں جاتا۔ پارلیمنٹ نے بدنیتی سے اوورسیز پاکستانیوں کے ووٹ کا معاملہ دوبارہ صفر پرپہنچا دیا، قیامت تک اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ کا حق نہیں دیا جائے گا۔ 

چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ جسٹس اطہر من اللہ نے کہا کہ یہ بہت پیچیدہ معاملہ ہے، ووٹ سیکیورٹی اورسیکریسی بہت ضروری ہے۔ انہوں نے درخواست گزارکے وکیل پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پارلیمینٹ کی قانون سازی کو بدنیتی نہیں کہا جا سکتا۔ 

مصنف کے بارے میں