پاکستان اسرائیل کو تسلیم نہیں کر رہا، وزیراعظم

پاکستان اسرائیل کو تسلیم نہیں کر رہا، وزیراعظم
کیپشن:   پاکستان اسرائیل کو تسلیم نہیں کر رہا، وزیراعظم سورس:   فائل فوٹو

اسلام آباد: وزیراعظم اسرائیل کو تسلیم کرنے بارے تاثر کو رد کرتے ہوئے کہا ہے کہ فلسطینیوں کو حق ملنے تک ایسا سوچا بھی نہیں جا سکتا۔ وزیراعظم عمران خان نے اپنے زیر صدارت پارٹی رہنماوں اور ترجمانوں کے اجلاس سے خطاب میں کہا اسرائیل سے متعلق قائداعظم کی پالیسی پر عمل پیرا ہیں اور پاکستان اسرائیل کو تسلیم نہیں کر رہا۔ فلسطینیوں کو حقوق ملنے تک اسرائیل کو تسلیم کرنے کا سوچا بھی نہیں جا سکتا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان میں وبا سے متاثرہ افراد کی تعداد روز بروز بڑھ رہی ہے۔ اپوزیشن اتحاد پی ڈی ایم کو موجودہ حالات میں جلسے بند کر دینے چاہیں کیونکہ ان کو جلسوں سے کوئی سیاسی فرق نہیں پڑ رہا اور اپنی لوٹی ہوئی رقم کو بچانے کے لئے عوام کو وبا کے رحم و کرم پر چھوڑا جا رہا ہے جبکہ ایک لیڈر خون لندن میں چھپ کر بیٹھا ہوا ہے۔ 

اپوزیشن جماعتوں کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے وزیراعظم نے کہا اس وقت دنیا وبا سے لڑ رہی ہے لیکن یہاں پر یہ لوگ قوم کا تماشا بنا رہے ہیں۔ ان کی تحریک سے حکومت کا نہیں بلکہ عوام اور معیشت کا نقصان ہو گا۔ صرف اور صرف ذاتی مفادات کی وجہ سے اپوزیشن کو عوام کی فکر نہیں ہے یہ جتنے مرضی جلسے کر لیں لیکن ان کو این آر او کسی صورت میں نہیں ملے گا 

اجلاس کے دوران وزیراعظم نے دعویٰ کیا کہ حکومتی اقدامات سے مہنگائی میں کمی واقع ہوئی ہے اور اس میں مزید کمی لانے کے لئے اقدامات کر رہے ہیں۔