عمران خان کا ہیلی کاپٹر پر بنی گالہ تک کا سفر 55 روپے فی کلومیٹر نکلا

عمران خان کا ہیلی کاپٹر پر بنی گالہ تک کا سفر 55 روپے فی کلومیٹر نکلا

image by facebook

اسلام آباد:وزیراعظم ہائوس سے عمران خان کا بذریعہ ہیلی کاپٹر سفر واقعی میں سستا نکلا ، یہ 50 سے 55روپے فی کلو میٹر تو نہیں لیکن بذریعہ سڑک جانے کے مقابلے میں کتنا ہے؟

برطانوی نشریاتی ادارے نے ہیلی کاپٹرکے بارے میں تفصیلات جاری کر دیں ، حیرت انگیز انکشافات، پیپلزپارٹی کے رہنما خورشید شاہ کے عمران خان کے ہیلی کاپٹر استعمال کرنے سے متعلق اعتراض کے بعد وزیر اطلاعات فواد چودھری نے ہیلی کاپٹر کا خرچ پچاس سے پچپن روپے فی کلو میٹر بتانے کے بعد نیا تنازعہ کھڑا ہوگیا۔

خورشید شاہ اور فواد چودھری کے انہی بیانات کو لے کر برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی اردو نے وزیراعظم عمران خان کے استعمال میں لائے جانے والے ہیلی کاپٹر پر ہی تحقیق کر ڈالی جس میں حیرت انگیز انکشافات سامنے آئے ہیں۔

برطانوی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی بنی گالا میں رہائشگاہ سے پاک سیکرٹیریٹ کا فاصلہ تقریباً 15 کلومیٹر بنتا ہے اور ہوابازی کی زبان میں اس فاصلے کو اگر دیکھا جائے تو یہ 8 ناٹیکل میل بنتا ہے اورجو ہیلی کاپٹر بنی گالا آنے جانے کے لئے استعمال کیا جاتا ہے۔

وہ آگسٹا ویسٹ لینڈ کمپنی کا ہیلی کاپٹر ہے جسے AW139 بھی کہا جاتا ہے۔ اس ہیلی کاپٹر کا فی ناٹیکل میل خرچ 13 ڈالر یعنی 600روپے ہے اب اگراسے 8سے ضرب دی جائے تو یہ ایک طرف کاخرچ 104 ڈالر بنتا ہے جو پاکستانی روپے میں تقریباً 12800 روپے ہے۔

اس طرح اگر دیکھا جائے تو وزیراعظم کے بذریعہ سڑک بنی گالا آنے جانے پر گاڑیوں کے قافلے اور سیکورٹی سے متعلق اقدامات پر بارہ ہزار آٹھ سو روپے سے کہیں زیادہ اخراجات آتے ہیں۔

برطانوی نشریاتی ادارے نے یہ اعداد و شمار اپریل 2018 تک کی دستیاب معلومات کے مطابق بتائے ہیں جبکہ وزیراعظم عمران خان جب بذریعہ روڈ بنی گالا جاتے ہیں تو ان کی سیکیورٹی کے حوالے سے وزیراعظم سیکرٹریٹ سے لے کر بنی گالہ تک سیکیورٹی اہلکار تعینات کیے جاتے ہیں , عوام کو بھی مشکلات کا سامنا ہوتا ہے ، اس طرح دیکھا جائے تو ہیلی کاپٹر کے ذریعے آنا جانا کافی سستا ہی پڑتا ہے۔