بیرون ملک سے آمدورفت، سعودی عرب نے پابندی میں توسیع کردی

Saudi Arabia extends travel ban
کیپشن:   فائل فوٹو

ریاض: سعودی عرب نے دنیا بھر میں عالمی وبا کی دوسری لہر پھیلنے کے خطرات کے پیش نظر مملکت میں بیرون ملک سے آنے والوں پر عائد پابندی میں ایک ہفتے کی مزید توسیع کر دی ہے۔ 

اس سلسلے میں سعودی وزارت داخلہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ہنگامی نوعیت کی پروازوں کو اس سے استثنیٰ حاصل ہوگا۔ خیال رہے کہ عالمی وبا کے تناظر می سعودی عرب کے حکام نے مملکت میں داخلے پر 12 دسمبر کو پابندی عائد کی تھی جس میں اب مزید ایک ہفتے کا اضافہ کر دیا گیا ہے۔

سعودی وزارت داخلہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ اقدام مملکت کے شہریوں کی حفاظت کیلئے اٹھایا گیا ہے۔ یہ پابندیاں اس وقت تک جاری رہیں گی جب تک عالمی وبا کی کشیدگی میں کمی نہیں آ جاتی۔

سعودی حکام کی جانب سے جاری ہدایت نامے میں کہا گیا ہے کہ اگر کوئی شخص ایسے ملک سے واپس پہنچا جہاں وبائی مرض کا پھیلاؤ ہے تو اس پر اپنا ٹیسٹ کرانا لازمی ہوگا۔ اس کے علاوہ ہر پانچ دن بعد ایسے شخص کا میڈیکل چیک اپ بھی ہوگا۔ اس ہدایت میں یورپ سمیت وبا سے متاثرہ دیگر ممالک سے سعودی عرب واپس آںے والے افراد پر لازمی قرار دیا گیا ہے کہ وہ خود کو 14 روز کیلئے خود کو گھروں میں قرنطینہ کریں۔

خیال رہے کہ موسم سرما آتے ہی یورپ اور امریکا سمیت دنیا بھر میں عالمی وبا میں پھیلاؤ ریکارڈ کیا جا رہا ہے۔ صورتحال اس قدر کشیدہ ہے کہ وبائی وائرس نے اپنی شکل تبدیل کر لی ہے۔ یہ نیا وائرس پہلے انگلینڈ کے جنوبی علاقوں میں رپورٹ ہوا، اس کے بعد جنوبی افریقا اور آسٹریلیا میں بھی اس کی موجودگی کی خبریں سامنے آئیں۔ اس کے پیش نظر مختلف ممالک نے پابندیاں سخت کر دی ہیں تاکہ اس کا پھیلاؤ روکا جا سکے۔