گھٹیا ترین جرائم میں تھانے اور جیل کی ہوا کھا نے والی نامور شخصیات ؟ 

 گھٹیا ترین جرائم میں تھانے اور جیل کی ہوا کھا نے والی نامور شخصیات ؟ 

اہور: اللہ تعالیٰ ہی عزت دیتا ہے اور اللہ ذلت ۔ہمارے ہیروز جن کو اتنی عزت ملی ہوتی ہے کہ کسی اور کو ملنی کم ہی نصیب ہوتی ہے ۔تاہم انہی ہیروز  سے جب غلطیاں ہوتی ہیں تو  آسمان کی بلندیوں سے نیچے آن گرتے ہیں۔ایسے ہی چند ہیروز ، معروف شخصیات کا تذکرہ آج کرتے ہیں اور بتاتے ہیں کہ انہوں نے کیا جرم کیا تھا ۔


ایان علی:

 ایان علی کو حال ہی میں منی لاںڈرنگ کے الزام میں بے نظیر انٹرنیشنل ائیرپورٹ سے گرفتار کیا گیا اور انہیں کئی دن اڈیالہ جیل میں گزارنے پڑے- اس وقت بھی یہ کیس عدالت میں زیرِ سماعت ہے البتہ ایان علی کو فی الحال ضمانت پر رہا کردیا گیا ہے- ایان علی کے جیل میں ناز نخروں اور ان پر 5 لاکھ ڈالر کی منی لانڈرنگ کے الزام نے انہیں مستقل خبروں کی شہہ سرخیوں میں رکھا-

 علی سلیم:

 بیگم نوازش علی کے روپ نے شہرت کی بلندیوں پر پہنچنے والے علی سلیم کو ہر کوئی جانتاہے - علی ایک بار اس وقت جیل کی ہوا کھانی پڑی جب انہوں نے اپنی والدہ فرزانہ سلیم سے جھگڑا کیا اور ہاتھا پائی کے دوران والدہ کی ناک کی ہڈی توڑ دی- یہ لڑائی مالی معاملات پر ہوئی- لڑائی کے وقت علی سلیم نے شراب کے نشے میں مبتلا تھے-

  میرا:

 2010 میں میرا کے اس وقت گرفتاری کے وارنٹ جاری ہوگئے جب انہیں کراچی ائیرپورٹ پر دو پاسپورٹ رکھنے کے جرم میں تحویل میں لے لیا گیا- میرا نے دوسرا پاسپورٹ اس دعویٰ کے ساتھ جاری کروایا تھا کہ ان کا پہلا پاسپورٹ گم ہوچکا ہے- میرا پر ایک بزنس مین سے نکاح کرنے کے باوجود ایک اور شادی کرنے کا الزام بھی عائد ہوچکا ہے-

 اسد ملک:

 اسد ملک کے مشہور ڈراموں میں دشت اور آنسو سرفہرست ہیں- اسد ملک بھی کچھ وقت جیل میں گزار چکے ہیں- اسد کی خودکار گن سے غلطی سے ایک شخص قتل ہوگیا تھا- دلچسپ بات یہ ہے کہ انہوں نے جیل میں ایک ایسا نیا دوست بنایا جو بعد میں پاکستان کا وزیراعظم بنا-

 عتیقہ اوڈھو:

 عتیقہ اوڈھو کو ایک ہوائی سفر کے دوران اپنے ساتھ شراب کی بوتل رکھنے پر گرفتار کیا گیا- کچھ وقت کے لیے یہ تحویل میں رہیں تاہم بعد میں انہیں چھوڑ دیا گیا- افواہ ہے کہ ان کی رہائی میں کسی سیاسی شخصیت نے اہم کردار ادا کیا ہے- بعض حلقوں کا کہنا ہے کہ وہ سیاسی شخصیت جنرل پرویز مشرف تھے-

معین خان:

 معین خان اس وقت انتہائی مشکلات کا شکار ہوگئے جب ان کی اہلیہ نے اپنے شوہر ہی کو گرفتار کروانے کے لیے پولیس بلوا لی- معین خان کی اہلیہ کا کہنا تھا کہ ان کے شوہر نے شراب کا نشہ کیا اور انہیں مارا پیٹا ہے- جس کے بعد معین کو درخشاں پولیس اسٹیشن نے گرفتار کیا اور جیل بھجوا دیا-

 سلمان بٹ٬ محمد عامر اور محمد آصف:

 2010 میں انہیں اسپاٹ فکسنگ کے الزام میں لندن میں گرفتار کیا گیا- بعد ازاں الزام ثابت ہونے کی صورت میں لندن کورٹ نے سلمان بٹ کو 30 ماہ٬ محمد آصف کو 1 سال اور محمد عامر کو چھ ماہ قید کی سزا سنائی- اس کے علاوہ آئی سی سی کی جانب سے بھی تینوں کھلاڑیوں کے کھیلنے پر پابندی عائد کر دی گئی-

 اعجاز احمد:

اعجاز احمد اپنے وقت ایک عظیم کھلاڑی تھے- لیکن اس عظیم کھلاڑی کو بھی اس وقت جیل کی ہوا کھانی پڑی جب انہوں نے ایک پراپرٹی ڈیلر کو ایک کروڑ کا چیک دیا اور وہ باؤنس ہوگیا- اعجاز احمد پر دھوکہ دہی کا الزام عائد ہوا اور انہیں 6 ہفتے جیل میں گزارنے کے بعد ضمانت پر رہا کر دیا گیا