پنجاب اسمبلی میں نیب کیخلاف قرارداد منظور

پنجاب اسمبلی میں نیب کیخلاف قرارداد منظور

لاہور: پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنماوں نے پنجاب اسمبلی میں نیب کے خلاف قرارداد منظور کرتے ہوئے وفاقی حکومت سے قوانین میں ترمیم کا مطالبہ کر دیا۔


تفصیلات کے مطابق صوبائی وزیر قانون رانا ثناءاللہ نے نیب کے خلاف قرارداد صوبائی اسمبلی میں پیش کی، جس میں کہا گیا کہ نیب قوانین بنیادی انسانی حقوق سے متصادم اور انسانی وقار کے منافی ہیں۔

قرار داد میں مزید کہا گیا کہ نیب کی طرف سے بیوروکریٹس کو ہراساں کیا گیا اور ان کی گرفتاری کی میڈیا میں تشہیر ماورائے عدالت کردار کشی اور غیر اخلاقی اقدامات ہیں۔ دوران اجلاس ن لیگ کے رہنماوں نے مطالبہ کیا کہ نیب سمیت ہر ادارہ بنیادی انسانی حقوق، اخلاقی اقدار اور آئین پاکستان کی پاسداری کو یقینی بنائے۔

قرار داد میں اس بات پر بھی زور دیا گیا کہ قومی احتساب بیورو کے آرڈیننس 99 کو آئین سے نکالا جائے کیونکہ یہ رشوت اور بدعنوانی کو محفوظ راستہ فراہم کر رہا ہے۔

واضح رہے کہ نیب کی جانب سے آشیانہ ہاؤسنگ سوسائٹی میں کرپشن کے الزام میں ایل ڈی اے کے سابق سربراہ احد چیمہ سمیت دیگر افراد کو گرفتار کیا گیا تھا جس پر پنجاب حکومت نے بھی شدید تحفظات کا اظہار کیا تھا۔