وزیراعظم نے ڈومیسٹک سمیت کرکٹ کی بہتری کے پی سی بی مجوزہ پلان مسترد کردیئے

وزیراعظم نے ڈومیسٹک سمیت کرکٹ کی بہتری کے پی سی بی مجوزہ پلان مسترد کردیئے
فوٹو فائل

اسلام آباد:وزیراعظم عمران خان نے پی سی بی کی جانب سے کرکٹ کی بہتری کے لیے پیش کردہ تمام پلان مسترد کردیے ہیں۔


تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز وزیراعظم کی زیرصدارت کرکٹ کی بہتری کے لیے اجلاس کا انعقاد کیا گیا جس میں وزیراعظم عمران خان نے پی سی بی کے جانب سے مجوزہ تمام پلان مسترد کردیے جب کہ ہارون رشید کی جانب سے بریفنگ شروع کرنے پر وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ میں نے 40 سال کرکٹ کھیلی ہے، مجھے کرکٹ پر بریفنگ نہ دیں، کرکٹ ٹھیک کرنی ہے تو مصلحتوں سے باہر آئیں۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ کسی سسٹم نے بھی پاکستان کرکٹ کو بہتر نہیں کیا، کھلاڑی صرف غیر معمولی ٹیلنٹ پر آگے آتے ہیں، سسٹم ان کی سپورٹ نہیں کرتا، آسٹریلیا کی طرز پر فرسٹ کلاس کرکٹ کی صرف 6 ٹیمیں بنائیں، پنجاب سے دو ٹیمیں بنا کر باقی صوبوں سے ایک ایک ٹیم بنائی جائے، جو سسٹم میں بتا رہا ہوں اس سے پاکستان کا مقابلہ دنیا کی کوئی ٹیم نہیں کر سکتی۔

ڈومیسٹک کرکٹ کے مجوزہ سٹرکچر پر حتمی فیصلہ نہ ہو سکا، وزیراعظم کی سفارشات کی روشنی میں پی سی بی کو نیا پلان بنانے کی ہدایت کی گئی ہے۔اجلاس میں چیئرمین پی سی بی نے وزیراعظم کو ڈومیسٹک کرکٹ کے انفراسٹرکچر پر بریفنگ دی۔اجلاس میں سیکرٹری آئی پی سی، پی سی بی کے ایم ڈی اور چیف آپریٹنگ آفیسر بھی شریک ہوئے۔