امریکہ میں چپس کے ڈبے میں زندہ سانپوں کو سمگل کرنیوالے شخص کو گرفتار کرلیا گیا

امریکہ میں چپس کے ڈبے میں زندہ سانپوں کو سمگل کرنیوالے شخص کو گرفتار کرلیا گیا

لاس اینجلس:امریکہ میں پوٹیٹو چپس کے ڈبے میں زندہ سانپوں کو سمگل کرنے والے شخص کو گرفتار کرلیا گیا ہے جس کے بعد ملزم نے اپنے جرم کا اعتراف بھی کرلیا۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی شہر لاس اینجلس میں زندہ سانپوں کو سمگل کرنے کی کوشش کرتے ہوئے روڈریگو فرانکو نامی شخص کو گرفتار کرنے کے بعد جیل بھیج دیا ۔


ملزم کے خلاف مقدمہ درج کروایا گیا جس کے بعد دوران سماعت ملزم نے اپنے جرم کا اعتراف کرتے ہوئے عدالت کو بتایا کہ وہ اس قسم کے پالتوں جانوروں کوبیحد پسند کرتا ہے او راسی لئے اس نے 3زندہ سانپ جو ناگ کی نسل سے تھے ہانگ کانگ سے لاس اینجلس لانے کی کوشش کی۔روڈریگو فرانکو کا کہنا تھا کہ اس نے پہلے بذریعہ ڈاک ان سانپوں کو بھیجنا چاہا تھا مگر پیکٹ پکڑا گیا جسکے بعد اس نے اسے اپنے ساتھ لیکر سفرکا ارادہ کیا۔

عدالت نے اس جرم پر مجرم سے انتہائی ہمدردی کا اظہار کیا اور صرف پانچ ماہ کی قید کا حکم دیا۔ ملزم کا کہناتھا کہ اس نے مزید 20سانپ لاس اینجلس اسمگل کرنے کی کوشش کی مگر وہ راستے میں ہلاک ہوگئے۔ کہا جاتا ہے کہ ملزم ایشیائی ممالک سے سانپ اور دیگر رینگنے والے جانور خریدتا تھا اور انہیں پہلے ہانگ کانگ لاتا اور پھر وہاں سے امریکہ سمگل کردیتا تھا۔