عدلیہ مخالف ریلی، سابق (ن) لیگی ایم این اے سمیت 4 ملزمان کو سزا

عدلیہ مخالف ریلی، سابق (ن) لیگی ایم این اے سمیت 4 ملزمان کو سزا
ملزمان کو ایک، ایک ماہ قید اور فی کس ایک لاکھ روپے جرمانے کی سزا سُنائی گئی۔۔۔۔فوٹو/ اسکرین گریب

لاہور: لاہور ہائیکورٹ نے عدلیہ مخالف ریلی نکالنے پر مسلم لیگ (ن) کے سابق ایم این اے شیخ وسیم اختر سمیت دیگر 4 ملزمان کو ایک، ایک ماہ قید اور فی کس ایک لاکھ روپے جرمانے کی سزا سُنا دی۔


لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس مظاہر اکبر نقوی پر مشتمل تین رکنی فل بینچ نے قصور میں عدلیہ مخالف ریلی نکالنے کے خلاف درخواست پر سماعت کی۔ عدالت نے کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے سابق ممبر قومی اسمبلی شیخ وسیم اختر اور ان کے 3 ساتھیوں کو ایک ایک ماہ قید کی سزا سناتے ہوئے فی کس ایک لاکھ روپے جرمانہ ادا کرنے کا بھی حکم دیا ہے۔

مزید پڑھیں: شاہد خاقان عباسی کیخلاف توہین عدالت کی درخواست سماعت کیلئے منظور

عدالت نے (ن) لیگ کے سابق ایم پی اے نعیم صفدر اور حاجی ایاز کو بری کردیا۔ کیس میں سزا پانے والے دیگر ملزمان میں مسلم لیگ (ن) قصور کے سینئر نائب صدر جمیل خان، سابق چیئرمین بیت المال قصور ناصر خان اور سابق چیئرمین بلدیات قصور احمد لطیف شامل ہیں۔

عدالت کی جانب سے سزا سنائے جانے کے بعد پولیس نے ملزمان کو کمرہ عدالت سے ہی گرفتار کر لیا۔ عدالت نے دو ملزمان ناصر خان اور جمیل خان کی جانب سے رحم کی اپیل کرنے پر انہیں معاف کر دیا۔ دونوں ملزمان کو معاف کرنے کی ہدایت چیف جسٹس پاکستان نے دی تھی۔

یہ بھی پڑھیں:  احسن اقبال نے عدالت سے غیر مشروط معافی مانگ لی

واضح رہے کہ قصور میں 13 اپریل کو عدلیہ مخالف ریلی نکالی گئی تھی جس کے خلاف 30 اپریل کو لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کی گئی تھی۔

 

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں