بارشوں کے باعث اربن فلڈنگ کا خطرہ، پی ڈی ایم اے نے ایڈوائزری جاری کر دی

بارشوں کے باعث اربن فلڈنگ کا خطرہ، پی ڈی ایم اے نے ایڈوائزری جاری کر دی

کراچی: یکم جولائی سے پانچ جولائی تک شہر قائد سمیت حیدر آباد، بدین اور ٹھٹھہ میں موسلا دھار بارشوں کا امکان ہے جس کے باعث پرووینشل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (پی ڈی ایم اے) نے ایڈوائزری بھی جاری کر دی ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق موسلا دھار بارشوں کی وجہ سے تین سے پانچ جولائی تک کراچی اور حیدرآباد میں اربن فلڈنگ کا خطرہ ہے جس کے باعث پی ڈی ایم اے سندھ نے متعلقہ اداروں کو ایڈوائزری جاری کی ہے۔ 

پی ڈی ایم اے نے کہا ہے کہ انتظامیہ ممکنہ اربن فلڈنگ اور دیگر خطرات سے نمٹنے کیلئے تیار رہے جبکہ ماہی گیروں کو تین سے پانچ جولائی تک سمندر میں جانے سے گریز کی بھی ہدایت کی گئی ہے۔

پی ڈی ایم اے کا کہنا ہے کہ نکاسی آب کیلئے مشینیں اور عملے کی موجودگی کو یقینی بنایا جائے، ضروت مند افراد کی مدد کیلئے ایمرجنسی ہیلپ لائن، ہسپتالوں میں بجلی کی مسلسل فراہمی کیلئے جنرینٹر اور دیگر انتظامات کئے جائیں۔

واضح رہے کہ محکمہ موسمیات نے 30 جون سے 4 جولائی تک ملک کے مختلف شہروں میں گرج چمک کے ساتھ موسلادھار بارش کی پیش گوئی کر رکھی ہے۔ 

محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ 29 جون سے مرطوب ہوائیں ملک کے بالائی علاقوں میں داخل ہو رہی ہیں جبکہ رواں ہفتے کے آخر میں یہ ہوائیں شدت اختیار کر کے ملک کے جنوبی حصے میں پھیل سکتی ہیں۔ 

مصنف کے بارے میں