آپ کی پالیسیاں معاشرتی ہم آہنگی کے منافی ہے،مسلم کھلاڑی کا ٹرمپ کو کھلا خط

آپ کی پالیسیاں معاشرتی ہم آہنگی کے منافی ہے،مسلم کھلاڑی کا ٹرمپ کو کھلا خط

واشنگٹن :امریکی مسلم خاتون کھلاڑی ابتہاج محمد نے صدر ٹرمپ کے نام ایک کھلا خط لکھا ہے جس میں اس نے کہا ہے کہ میرا حجاب اوڑناملک میں بسے مسلمان خوف ، نفرت آمیز رویے ،اشتعال انگیزی اور اپنے خلاف تشددکا شکار ہیں جو کہ امریکی اقدار کی نفی کرتا ہے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکہ کی با حجاب خاتون کھلاڑی نے صدر ٹرمپ کے نام ایک کھلا خط لکھا ہے ۔


ریو اولمپکس میں کانسی کا تمغہ جیتنے والی امریکی کھلاڑی ابتہاج محمد نے اپنے خط میں صدر سے کہا ہے کہ وہ ملک میں آزادی و انصاف کے نام پر جاری کاروائیوں سے سخت خائف ہیں۔ ابتہاج محمد کا یہ خط ٹائم میگزین کی نئی اشاعت میں بھی شائع ہوا ۔

مجھے ایک امریکی ہوائی اڈے پر تلاشی کے دوران انتہائی حقارت آمیز رویے کا سامنا کرنا پڑا ،نیو یارک کی سڑکوں پر چلتےہوئے آبائی ملک واپسی کے طعنے دیئے گئے جس سے مجھے اندازہ ہوا کہ موجودہ امریکہ وہ ملک نہیں ہے جسےدنیا میں انسانی اقدار کے احترام اور جمہوریت کا علمبردار مانا جاتا تھا جبکہ میرا ماننا ہے کہ دہشت گردی کے موضوع کو مہاجرین سے منسلک کرنا مناسب نہیں جو کہ ہمارے معاشرتی ڈھانچے میں خلیج حائل کرے گا۔