پی ڈی ایم کا اسلام آباد میں پڑاؤ اور جلسہ ختم کرنے کا اعلان

پی ڈی ایم کا اسلام آباد میں پڑاؤ اور جلسہ ختم کرنے کا اعلان

اسلام آباد: اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے قائدین مولانا فضل الرحمن اور پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف نے رات تقریباً 3 بجے پڑاؤ اور جلسہ ختم کرنے کا اعلان کر دیا۔ 

تفصیلات کے مطابق وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے جلسے کے پاکستان مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز شریف نے خود روسٹرم پر آ کرقومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف کو خطاب کی دعوت دی اور کہا آج پاکستان کو شہباز شریف کی ضرورت ہے۔

بعد ازاں شہباز شریف نے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کے ’ایبسلوٹلی ناٹ‘ کے بیان کو ڈرامہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ عمران نیازی کے پونے چار سال کے کرتوتوں کے خلاف تحریک عدم اعتماد پیش کی۔ عمران خان نے دن رات جھوٹ بولا، یوٹرن لیا، کیا ریاست مدینہ میں ایسا کوئی سوچ سکتا ہے؟ 

ان کا کہنا تھا کہ عمران نیازی نے ریاست مدینہ کی بات کر کے مافیاز کو کرپشن کا موقع فاہم کیا اور عوام کی جیبوں پر ڈاکہ ڈالتے ہوئے انہیں کنگال کر دیا، قوم کے اربوں کھربوں روپے کے وسائل برباد ہو گئے، کیا مہنگائی اور غربت بین الااقوامی سازش کا نتیجہ ہے؟

قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف کا کہنا تھا کہ پاکستان میں محرومیاں راتوں رات ختم نہیں ہوں گیں بلکہ ان کے خاتمے کیلئے وقت درکار ہیں، اگر ہم ابھی سے پاکستان کو درپیش مسائل کے خلاف کمربستہ ہو جائیں تو کوئی شک نہیں مسائل حل ہو سکتے ہیں۔ 

انہوں نے مزید کہا کہ عمران نیازی خودداری سیکھنی ہے تو نواز شریف سے سیکھو جس نے بھارت کے 5 ایٹمی دھماکوں کے جواب میں 6 دھماکے کئے، نواز شریف نے امریکی صدر سے کہا کہ پیسے نہیں اپنی قوم کی خودداری چاہئے لیکن تم خوددار نہیں بلکہ خود غرض ہو، تم قوم پر ایک قرض ہو۔ 

مصنف کے بارے میں