دہشت گردی کیخلاف جنگ میں 100 ارب سے زائد کا نقصان ہوا : احسن اقبال

دہشت گردی کیخلاف جنگ میں 100 ارب سے زائد کا نقصان ہوا : احسن اقبال

اسلام آباد :وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال نے کہا ہے کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں 6ہزار سے زائد شہید اور 70ہزارزخمی ہوئے، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں 100ارب سے زائد کا نقصان ہوا، ہم نے نیشنل ایکشن پلان بنایا، انسداد دہشت گردی فورس بنائی، کراچی میں امن بحال کیا، بلوچستان میں امن لائے اور قبائلی علاقوں میں آپریشن کیا، خواتین دہشت گردی کے خلاف جنگ میں بھرپور کردار ادا کر رہی ہیں، اسلام آباد میں 200کی نفری پر اینٹی رائٹ پولیس بنائیں گے۔


وزیر داخلہ احسن اقبال نے پولیس لائنز کا دورہ کے موقع پر کہا کہ تربیت مکمل کرنے پر انسداد دہشت گردی فورس کو مبارکباد دیتا ہوں، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں چھ ہزار سے زائد شہید اور ستر ہزار زخمی ہوئے، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں معیشت کو 100ارب سے زائد کا نقصان ہوا، ہم نے نیشنل ایکشن پلان بنایا، انسداد دہشت گردی فورس بنائی، ملک میں دہشت گردوں کے خلاف بھرپور آپریشن شروع کیا، کراچی میں امن بحال کیا، بلوچستان میں امن لائے اور قبائلی علاقوں میں آپریشن کیا، ہم نے پورے ملک میں سیکیورٹی آپریشنز شروع کئے، سیکیورٹی آپریشنز کے دوران بڑی حد تک دہشت گردوں کی کمر توڑ دی ہے، ہمارے دشمن ہمارے خلاف ہم سے زیادہ تیزی سے کام کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہ پیشہ بہت مقدس پیشہ ہے، آپ قوم اور وطن کی حفاظت کر رہے ہیں، اسلامی ملک میں جہاد کا صرف ریاست کو حق ہے، یہ جہاد ملک کی سپاہ اور افواج کر سکتی ہیں اور کر رہی ہیں، فورس میں میرٹ کو مقدم رکھا گیا ہے، خواتین کی انسداد دہشت گردی فورس میں شمولیت پر خوشی ہے، خواتین دہشت گردی کے خلاف جنگ میں بھرپور کردار ادا کر رہی ہیں، اب ہمیں اسلام آباد کو فول پروف سیکیورٹی فراہم کرنا ہے، اسلام آباد کیلئے 2000کی نفری پر اینٹی رائٹ پولیس بنائیں گے۔