شاہد خاقان عباسی کیخلاف ایک اور کیس نیب نے کھول دیا

شاہد خاقان عباسی کیخلاف ایک اور کیس نیب نے کھول دیا
اگر مجھے کل نیب نے گرفتار کیا تو پھر گرفتاری دے دوں گا، شاہد خاقان عباسی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔فائل فوٹو

راولپنڈی: مسلم لیگ ن کے سنیئیر نائب صدر اور سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے گرد نیب نے گھیرا مزید تنگ کر دیا۔ قومی احتساب بیورونے سابق شاہد خاقان عباسی کے خلاف ایک اور کیس کھول کر انہیں طلب کر لیا ہے۔ 


شاہد خاقان کو سابق منیجنگ ڈائریکٹر منرل ڈیویلپمنٹ کارپوریشن خالد سجاد کھوکھر کی تقرری کے کیس میں طلب کیا گیا ہے۔

نیب راولپنڈی کے دفتر میلوڈی اسلام آباد میں لیگی رہنما کو کل صبح 10 بجے طلب کیا گیا ہے اور کہا گیا ہے کہ ان کی عدم پیشی کی صورت میں نیب آرڈیننس کے تحت کارروائی کی جائے گی۔ 

دوسری طرف شاہد خاقان عباسی نے اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ اگر مجھے کل نیب نے گرفتار کیا تو پھر گرفتار ی دے دوں گا، میری گرفتاری پر کونسی بڑی قیامت آ جائے گی۔ 

واضح ر ہے کہ نیب نے 18 جولائی 2019 کو ایل این جی کیس میں شاہد خاقان عباسی کو گرفتار کیا تھا تاہم بعد میں 25 فروری 2020 کو اسلام آباد ہائیکورٹ نے انہیں ضمانت پر رہا کیا تھا۔

اس کے بعد وہ پاکستان اسٹیٹ آئل کے منیجنگ ڈائریکٹر کی غیر قانونی طور پر تقرری کیس میں سندھ ہائیکورٹ سے عبوری ضمانت پر ہیں۔