مکیش امبانی نے چھوٹے بھائی کو مہنگا ترین تحفہ دیدیا

مکیش امبانی نے چھوٹے بھائی کو مہنگا ترین تحفہ دیدیا

نئی دہلی : بھارت کے بڑے صنعتکارو ں میں  شمار ہونے والے مکیش امبانی نے اپنے والد کے یوم پیدائش پر چھوٹے بھائی کو یاد رکھا اور انہیں 23ہزار کروڑ روپے کا تحفہ دیا ہے۔


تفصیلات کے مطابق گزشتہ رات دونوں بھائیوں کے درمیان تجارتی معاہدہ ہوا ہے جس کے تحت انل امبانی کی کمپنی ریلائنس کمیونیکیشن کو دیوالیہ ہونے سے بچا لیا گیا ہے۔ دراصل انل امبانی کا کاروبار دن بدن انحطاط پذیر ہورہا ہے۔ ریلائنس کمیونیکیشن اس وقت 45ہزار کروڑ روپے کی قرضدار ہے۔ انل امبانی نے 2Gاور 3G اسپکٹرم کے آپریشن نومبر میں ختم کر دیئے اور صرف انٹرپرائز بزنس تک محدود ہو کر رہ گیا ہے۔

علاوہ ازیں وہ اثاثوں کو بھی فروخت کر رہے ہیں۔ مکیش امبانی نے اس صورتحال سے انل امبانی کو بچانے کیلئے جو معاہدہ کیا ہے اسکے تحت ریلائنس کمیونیکیشن اور مکیش امبانی کی کمپنی ریلائنس جیو مشترکہ کاروبار کریں گی۔ ریلائنس کمیونیکیشن معاہدے کے تحت ریلائنس جیو کو وائرلیس اسپیکٹرم ، ٹاور ، فائبر اینڈ میڈیا آلات اور دیگر ضرورت کی چیزیں فروخت کریگی جس کی مالیت 23ہزار کروڑ روپے رکھی گئی ہے۔ اس طرح مکیش امبانی کی ریلائنس جیو مارکیٹ میں نیلامی کی حصہ دار بھی نہیں بنے گی۔ جنوری سے مارچ 2018ء کے درمیان مکیش امبانی کی یہ رقم انل امبانی ایک قرض کے طور پر استعمال کریں گے لیکن اس کا کوئی منافع یا سود نہیں لیا جائیگا بلکہ ریلائنس جیو کو اس رقم کے بدلے مذکورہ اشیاء فراہم کی جائیں گی۔ اس طرح ریلائنس کمیونیکیشن کو 45ہزار کروڑ روپے کا آدھا قرض چکانے کا موقع ملے گا۔