شہباز شریف14شہریوں کے قتل میں نامزد ملزم ہیں، انہیں وزیر اعظم نامزد کرنا قانون سے مذاق ہے، ڈاکٹر طاہرالقادری

لاہور:نواز شریف کے وزیر اعظم کے عہدے سے برطرفی کے بعد شہباز شریف کو وزیراعظم بنانے کےلیئے متفقہ اعلان ہو چکاہے ۔تاہم شہباز شریف کی بطور وزیر اعظم تقرری کی مخالفت میں بھی آوازیں بلند ہونا شروع ہوگئی ہیں۔تفصیلات کے مطابق پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہرالقادری نے کہا ہے کہ شہباز شریف ماڈل ٹاﺅن میں 14شہریوں کے قتل میں نامزد ملزم ہیں۔ ایسے شخص کو وزیر اعظم نامزد کرنا قانون سے مذاق ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان عوامی تحریک (PAT) کے سربراہ اور معروف اسکالر ڈاکٹر علامہ طاہر القادری نے اپنے ایک بیان میں مسلم لیگ ن کی جانب سے شہبازشریف کو مستقل وزیراعظم کیلیے نامزد کیے جانے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ باقر نجفی کمیشن نے شہباز حکومت کو سانحہ ماڈل ٹاﺅن کا ذمہ دار ٹھہرایا۔

شہباز شریف سانحہ ماڈل ٹاﺅن میں 14شہریوں کے قتل میں نامزد ملزم ہیں ایسے شخص کو ملک کا وزیر اعظم نامزد کرنا قانون سے مذاق ہے۔ سابق وزیر اعظم نواز شریف کی نااہلی پر طاہرالقادری کا کہنا تھا کہ پاناما کے مجرم کی اقامہ پر وضاحتیں کھسیانی بلی کھمبا نوچے کے مترادف ہیں۔ اشرافیہ کے جرائم کی فہرست بڑی طویل ہے انہیں پوری سزا ملنی چاہیے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں