کرکٹ بورڈ میں تبدیلی کی افواہیں ، مکی آرتھر پریشان ہوگئے

کرکٹ بورڈ میں تبدیلی کی افواہیں ، مکی آرتھر پریشان ہوگئے

فوٹو: فائل

لاہور : حکومت کی تبدیلی کے بعد پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئر مین نجم سیٹھی کی کرسی خطرے میں دکھائی دے رہی ہے جس نے قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر کو بھی پریشان کردیا ہے۔ مکی آرتھر کو ڈر ہے کہ نئے چیئرمین کے دور میں شاید انھیں یہ آزادی حاصل نہیں ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق عام انتخابات میں حکومت کے ساتھ ساتھ پاکستان کرکٹ بورڈ میں بھی بڑی تبدیلی کا امکان ظاہر کیا جارہا ہے جہاں لیجنڈری فاسٹ باولر وسیم اکرم کونجم سیٹھی کی جگہ چیئر مین پی سی بی کی کرسی سنبھالنے کیلئے فیورٹ امیدوار تصور کیا جارہا ہے۔نجم سیٹھی اس وقت پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئر مین کے طور پر اپنی خدمات سر انجام دے رہے ہیں ، انہوں نے 2013ءاور2014ءمیں بھی کچھ عرصے کے لیے یہ کرسی سنبھالی تھی جس کے بعد شہریار خان کو چیئر مین پی سی بی منتخب کرلیا گیا اور نجم سیٹھی ایگزیکٹو کمیٹی کے چیئر مین بن گئے ،گزشتہ سال نجم سیٹھی نے پاکستان کرکٹ بورڈ کے 30چیئر مین کے طور پر اپنے سیٹ سنبھالی ہے اور اب وسیم اکرم کے ایک فیملی ممبر کے مطابق اس بات کا قوی امکان موجود ہے کہ سابق کپتان کو پاکستان کرکٹ بورڈ کی باگ دوڑ سونپی جاسکتی ہے ،مذکورہ فیملی ممبر کا کہنا تھا کہ عمران خان اور وسیم اکرم اپنے کرکٹ کیریئر سے ایک دوسرے کے ساتھ منسلک ہیں اور اب دونوں ملک کو بلندیوں کی جانب لے جانے کے لیے تیار ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ثانیہ مرزا کا ٹوکیو 2020 اولمپکس میں حصہ لینے کے عزم کا اظہار

دریں اثنا موجودہ صورتحال سے قومی کرکٹ ٹیم کے غیرملکی کوچ مکی آرتھر بھی متاثر ہوئے ہیں،انھوں نے بعض کھلاڑیوں سے رابطہ کر کے پوچھا کہ کیا بورڈ میں تبدیلی آنے والی ہے؟آرتھر کو نجم سیٹھی نے فری ہینڈ دیا ہوا ہے اور ٹیم کے معاملات میں کوئی مداخلت نہیں کرتا، مکی آرتھر کو ڈر ہے کہ نئے چیئرمین کے دور میں شاید انھیں یہ آزادی حاصل نہیں ہوگی۔